ایل این جی کرپشن کیس، مفتاح اسماعیل کی 7 روزہ حفاظتی ضمانت منظور

 

کراچی(پبلک نیوز) سندھ ہائی کورٹ نے ایل این جی کرپشن کیس میں مفتاح اسماعیل اور عمران  الحق کی حفاظتی ضمانت منظور کر لی۔ حفاظتی ضمانت 7 روز کے لیے منظور کی گئی ہے۔ عدالت نے دونوں ملزمان کو نیب کے ساتھ تعاون کرنے کا حکم بھی دے دیا۔

 

سندھ ہائی کورٹ میں ایل این جی کیس کے شریک ملزم مفتاح اسماعیل اور عمران شیخ کی درخواست ضمانت پر سماعت ہوئی۔ عدالت نے مفتاح اسماعیل اور عمران الحق سیخ کی درخواست ضمانت منظور کرلی گئی۔ ملزمان کی درخواست ضمانت 7 روز کے لئے منظور کی گئی۔

 

ذرائع کے مطابق ملزمان کی درخواست ضمانت 5 لاکھ کے مچلکوں کے عوض منظور کی گئی۔ عدالت نے دونوں ملزمان کو نیب کے ساتھ تعاون کرنے اور متعلقہ عدالت میں پیش ہونے کا حکم بھی دیا۔

نیب پراسیکیوٹر کا دلائل دیتے ہوئے کہنا تھا کہ سابق وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل اور سابق منیجنگ ڈائریکٹر پی ایس او عمران الحق کے وارنٹ چئیرمین نیب نے جاری کئے۔ ملزم شاہد خاقان عباسی نے ایل این جی کا ٹھیکہ اس کمپنی کو دیا جس میں وہ خود شئیر ہولڈر تھے۔

 

پراسیکیوٹر نیب کا مزید کہنا تھا کہ شاہد خاقان عباسی کو گزشتہ روز چئیرمین نیب کی اجازت کے بعد گرفتار کیا گیا۔ مفتاح اسماعیل اور عمران الحق کی گرفتاری ایل این جی کیس میں اہم پیشرفت لاسکتی ہے۔ مفتاح اسماعیل نے سوئی سدرن گیس کمپنی کےبورڈمیں اینگرو کو ایل این جی ٹرمینل کا ٹھیکہ دینےکی منظوری دی۔

 

مفتاح اسماعیل کے وکیل کا کہنا تھا کہ مفتاح اسماعیل نے نیب کے ساتھ پہلے بھی تعاون کیا اور اب بھی تعاون کرنے کے لیے تیار ہیں۔ گزشتہ روز مفتاح اسماعیل کے گھر پر غیر قانونی چھاپہ مارا گیا۔ ملزمان کیخلاف کارروائی قانون کی خلاف ورزی ہے

 

احمد علی کیف  1 ماه پہلے

متعلقہ خبریں