شریف برادران لوٹی ہوئی دولت کسی صورت واپس نہیں دیں گے: شیخ رشید

لاہور(مستنصر عباس) وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید نے ایک مرتبہ پھر آئی ایم ایف کے پاس جانے اور مہنگائی مزید بڑھنے کا مزید عندیہ دے دیا۔ ساری بارگین کا ماسٹر مائنڈ شہباز شریف ہے۔ آسف زرداری کماتا ہے تو لگاتا بھی ہے۔

 

ریلوے ہیڈ کوارٹرز لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید نے تیس تاریخ کو وزیراعظم جناح ایسکپریس ٹرین کا افتتاح کریں گے۔ غیر ضروری اسٹیشنز پر اربوں روپیہ لگایا گیا، لاہور کراچی پر کچھ خرچ نہیں کیا گیا۔ نارووال کی آمد چھے لاکھ نہیں۔ ساڑے چھے ہزار ٹرین کا کرایہ رکھا گیا ہے۔ گرین لائن اور جناح ایکسپریس کا کرایہ ایک جیسا ہی ہو گا۔ تمام سیلون آن لائن کرایے پر دستیاب ہوں گے۔

 

وفاقی وزیر ریلوے کا کہنا تھا کہ آرٹ اینڈ ڈیزائن کے بچے ان کے ڈیزائن بنائے گے، ہم نے پچھلے سال کی نسبت زیادہ انکم ہوئی ہے۔ ایم ایل ون کو تین فیسز میں مکمل کیا جائے گا۔ تفتان سے کوئٹہ سٹنڈرڈ گیج پر لے کر جائے گے۔ گواردر تک بھی سٹنڈرڈ بنائے گے۔ پہلے بھی کوئی جیل نہیں تھی کبھی آتے تھے کبھی جاتے تھے۔ کھوسہ صاحب ایسے فیصلے دے سکتے ہیں۔ سپریم کورٹ کا فیصلہ درست ہوا، رائل پام نے ایک روپیہ جمع نہیں کرایا۔ رمضان میں یہ بند نہیں ہوں گے۔

شیخ رشید کا مزید کہنا تھا کہ انڈیا کی نئی مرین پاکستان کے نشانے پر ہیں۔ مودی الیکشن کیلئے ایسی حکمت عملی اپنائے ہوئے ہیں۔ انڈیا نے نو میزائل کا نشانہ بنایا۔ ہم نے بائیس جگہوں کا نشانہ بنایا۔ کوئی بنی گالہ سے چیخیں نہیں نکل رہی، بلاول ٹرین پر آگیا ہے۔ بلاول کے جانے کے بعد خوشبو تو آئے گی۔ ہر طرح کی چلائے گے جس کو جو سوٹ کرتی ہے، وہ اس میں سفر کریں۔ کاش نواز شریف خاندان وہ کرتا جو وہ کہتا ہے، یہ اندر سے کچھ ہیں باہر سے کچھ شریف برادران کی گاڑی کو کسی نے ریس نہیں دی۔

 

وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید نے کہا کہ ان کو بہت سی بیماریاں ہیں یہ مال بھی حرام کا کماتے ہیں۔ ساری بارگین کا ماسٹر مائنڈ شہباز شریف ہے۔ ایک ہزار ارب ادھر سے ادھر گیا، اگلے ماہ آئی ایم ایف کے پاس جائے گے۔ مہنگائی مزید بڑھے گی۔ انٹر نیشنل عدالت میں جانے کا سوچ رہا ہوں۔ سمجھوتہ میں آگ لگائی گئی۔ پیپلز پارٹ کو ہماری ٹرین سے فائدہ ہوا، اب میں اپنا سیلون بھی ان کو دو گا، میں نیب کا آرڈینینس تبدیل کرنے کیلئے ووٹ نہیں دوں گا۔ شریف برادران لوٹی ہوئی دولت کسی صورت واپس نہیں دیں گے، جبکہ آسف زرداری کماتا ہے تو لگاتا بھی ہے۔ ن لیگ لاہور اور پیپلز پارٹی کراچی میں کیسز لگیں۔ دونوں خاندانوں کا مستقبل کچھ بھی نہیں ہے۔

عطاء سبحانی  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں