ہم اپنے مستقبل اور فیصلوں کو باہر سے آئی 'این جی اوز' پر نہیں چھوڑ سکتے: سراج الحق

لاہور (پبلک نیوز) امیر جماعت اسلامی سینیٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ ہم اپنے مستقبل اور فیصلوں کو باہر سے آئی این جی اوز پر نہیں چھوڑ سکتے۔ قرآن مجید میں حکم ہے کہ رزق کے خوف کی وجہ سے اولاد قتل نہ کرو۔ غربت اور مالداری کا مسئلہ اب سے نہیں شروع سے ہے۔ غربت کی اصل وجہ دولت کا چند ہاتھوں میں ہونا ہے۔

قومی مسئلہ آبادی سیمنار میں اظہار خیال کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ سابق چیف جسٹس ثاقب نثار نے ایک تقریب کا انعقاد کیا جس کا موضوع آبادی میں اضافہ مسائل کی وجہ ہے۔ انہوں نے ایک بڑے مقام اور عہدے پر رہتے ہوئے آبادی کم کرنے کے حق میں اور آبادی بڑھانے کے خلاف کام آغاز کیا۔

 

انہوں نے کہا کہ اسلام ایک مکمل دین ہے۔ قرآن اور حدیث ہر مسئلہ پر ہماری راہنمائی کرتا ہے۔ اس بڑے مسئلہ پر بھی قرآن اور احادیث نے ہماری رہنمائی فرمائی ہے۔ نبی اکرمؐ نے کبھی کسی صحابی کو اولاد کے اضافہ سے نہیں روکا۔ قران مجید میں حضورؐ کی زندگی کو بہترین نمونہ قرار دیا گیا ہے۔

 

سینیٹر سراج الحق کا کہنا تھا کہ اس تقریب کا مقصد کوئی فتویٰ جاری کرنا نہیں۔ قرآن مجید میں حکم ہے کہ رزق کے خوف کی وجہ سے اولاد قتل نہ کرو۔ غربت اور مالداری کا مسئلہ اب سے نہیں شروع سے ہے۔ جب دنیا کی آبادی محظ لاکھوں میں تھے تب بھی غربت تھی۔ بلوچستان کی آبادی کم ہے لیکن رقبہ زیادہ مگر وہاں خوشحالی نہیں۔

 

امیر جماعت اسلامی نے واضح کیا کہ سندھ کے دور دراز میں جہاں آبادی کم اور زمین زیادہ ہے وہاں خوشحالی نہیں۔ پنجاب میں آبادی زیادہ ہے مگر خوشحالی ہے۔ ہم اپنے مستقبل اور اپنے فیصلوں کو باہر سے آئی این جی اوز پر نہیں چھوڑ سکتے۔ غربت کی اصل وجہ دولت کا چند ہاتھوں میں ہونا ہے۔

حارث افضل  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں