پاکستان دوحہ میں امریکا، افغان طالبان مذاکرات کا حصہ نہیں ہوگا، ترجمان دفترخارجہ

اسلام آباد (پبلک نیوز) ترجمان دفتر خارنہ کی جانب سے کہا گیا ہے کہ پاکستان امریکہ اور افغان طالبان میں دوحا مزاکرات کا حصہ نہیں ہوگا۔ افغانستان میں امن کوششوں کی حمایت جاری رہے گی۔ پلوامہ واقعے پر بھارت سے مزید قابل عمل معلومات طلب کر لیں۔

وفاقی دارالحکومت میں میڈیا بریفنگ کے دوران دفتر خارجہ کے ترجمان ڈاکٹر محمد فیصل نے کہا کہ پاکستان نے پلوامہ ڈوزیئر پر بھارت سے مزید معلومات مانگ لی ہیں۔ امید ہے بھارت جواب دے گا۔ پلوامہ حملے کے بعد بھارتی جارحیت کا منہ توڑ جواب دیا اگر آئندہ کوئی جارحیت کی گئی تو اپنا دفاع کریں گے۔

ترجمان نے کہا کہ پاکستان دوحا میں ہونے والے امریکہ اور طالبان کے مذاکرات کا حصہ نہیں ہوگا ۔ تاہم پاکستان افغان مفاہمتی عمل کا حامی ہے ۔ اور افغانستان میں امن کی کوششوں کی حمایت جاری رکھے گا۔

ترجمان نے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ حریت رہنماء یاسین ملک کو بدنام زمانہ تہاڑ جیل میں منتقل کرنا قابل تشویش ہے۔

احمد علی کیف  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں