انڈیکس رواں مالی سال کی کم ترین سطح 38ہزار سے بھی نیچے آ گیا

پبلک نیوز: آئی ایم ایف کی بے رخی اور زرمبادلہ ذخائر میں کمی سے پاکستان اسٹاک ایکسچینج پر شدیدمندی کا رجحان رہا۔ ہنڈرڈ انڈیکس میں ایک ہی روز میں تیرہ سو سے زائد پوائنٹس کی کمی ہو گئی۔ انڈیکس رواں مالی سال کی کم ترین سطح 38ہزار سے بھی نیچے آ گیا۔

پاکستان اسٹاک ایکسچینج میں مندی کے بادل چھا گئے۔ کاروباری ہفتے کے پہلے ہی روز سرمایہ کاروں کی جانب سے شئیرز کی فروخت کا رجحان غالب رہا۔ کاروبار کے اختتام پر 100 انڈیکس 1328 پوائنٹس کی شدید مندی ریکارڈ کی گئی۔ اس طرح انڈیکس رواں سال کی کی کم ترین سطح 37 ہزار 898 پر بند ہوا۔ آج حصص بازار میں 6.28ارب روپے مالیت کے 18 کروڑ 58 لاکھ شئیرز کا کاروبار کیا گیا۔

معاشی تجزیہ کاروں کا کہنا ہے کہ موجودہ  سیاسی صورتحال آئی ایم ایف کی پاکستانی معیشت پر بیاں اور حکومت کی گرتے زرمبادلہ کے ذخائر پر کوئی وضاحت نہ آنے پر سرمایہ کاروں کے محتاط ہو جانے کے باعث سامنے آئی۔

گذشتہ ہفتے کے دوران بھی مندی کا سلسلہ تھا۔ جس سے 6 سیشن میں ہنڈرڈ میں اب تک مجموعی طور پر 3100 پوائنٹس کی شدید مندی ریکارڈ کی گئی اور 6 سیسشن میں مارکیٹ کپٹیل لائزیشن میں 450 ارب روپے کی کمی ریکارڈ کی گئی۔

دوسری جانب حصص بازار کی مندی کے بعد اوپن مارکیٹ میں ڈالر ڈیڑھ روپے مہنگا ہو کر 129 روپے کی سطح پر پہنچ گیا۔

احمد علی کیف  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں