سانحہ فیکٹری سندر انڈسٹریل ایریا میں امداد فراہمی میں مبینہ کرپشن کا انکشاف

لاہور(ادریس شیخ) سانحہ فیکٹری سندر انڈسٹریل ایریا میں امداد فراہمی میں بھی مبینہ کرپشن کا انکشاف ہوا ہے۔ جاں بحق ہونے والے افراد کے لواحقین اور زخمی افراد کو فراہم کی گئی امداد میں غیر مستحق افراد کو نوازے جانے کا انکشاف ہوا ہے۔

 

تفصیلات کے مطابق 2015 میں ہونے والے سانحہ سندر فیکٹری میں 17 افراد جان کی بازی ہار گئے اور 70 زخمی ہوئے۔ پنجاب حکومت نے جاں بحق ہونے والے افراد کے لواحقین اور زخمیوں کو مالی امداد فراہم کی اور اس امداد سے متعلق رپورٹ منظر عام  پر آ گئی ہے جس میں کروڑوں روپے کی مبینہ کرپشن کا انکشاف ہوا ہے۔

رپورٹ کے مطابق مالی امداد قانونی ورثا کی شناخت کے بغیر، شناختی کارڈز چیک کیے بغیر اسپتال ریکارڈ کے بغیر ہی فراہم کی گئی۔ شناخت اور تصدیق کے بغیر فراہم کی گئی امداد کو مشکوک قرار دیا گیا ہے۔ ہلاک ہونے والے افراد کے لواحقین کو 8،8 لاکھ اور زخمیوں کو 2 لاکھ 40 ہزار روپے دیے گئے۔

سانحہ سندر فیکٹری کے دوران جاں بحق ہونے والے افراد کے لواحقین اور زخمی افراد کو فراہم کی گئی امداد میں غیر مستحق افراد کو نوازے جانے اور قوانین کی خلاف ورزی سے متعلق تحقیقات کا حکم دے دیا گیا ہے۔

عطاء سبحانی  3 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں