خاتون اور4 بچوں کے قاتل کو 5 بار سزائے موت کا حکم

اسلام آباد (پبلک نیوز) سپریم کورٹ نے خاتون اور 4 بچوں کے قاتل کی 5 بار سزائے موت کو عمر قید میں تبدیل کرنے کی استدعا مسترد کردی۔

 

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ نے مجرم فیصل کو 5 بار سزائے موت دینے کا پشاور ہائیکورٹ کا حکم برقرار رکھتے ہوئے بریت کی اپیل بھی مسترد کردی۔

 

مجرم فیصل نے 2009 میں پشاور میں خاتون، 3 بچوں اور ان کی کم عمر ملازمہ کو قتل کیا تھا۔ جرم ثابت ہونے پر ٹرائل کورٹ نے اسے 5 بار سزائے موت دینے کا حکم دیا جسے پشاور ہائیکورٹ میں چیلنج کیا گیا تاہم عدالتِ عالیہ نے بھی ٹرائل کورٹ کے حکم کو برقراررکھا۔

 

چیف جسٹس پاکستان آصف سعید کھوسہ نے کیس میں ریمارکس دیے کہ زیورات چوری کرنے کے لیے خاتون اور بچوں کو قتل کیا گیا، بچوں کو اس لیے قتل کیا گیا کہ بعد میں گواہ نہ بن جائیں، قتل کو چھپانے کے لیے ملزم نے گھر کو آگ لگا دی۔ جس پر سپریم کورٹ نے سزائے موت کا فیصلہ برقرار رکھتے ہوئے بریت کی اپیل مسترد کر دی۔

حارث افضل  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں