پی ٹی آئی حکومت 15 اپریل کو نئی ایمنسٹی سکیم کا اعلان کریگی

اسلام آباد (پبلک نیوز) حکومت نے ایمنسٹی اسکیم سے 400 سے 500 ارب روپے ٹیکس اگٹھا ہونے کا تخمینہ لگایا ہے۔ نئی ایمنسٹی سکیم کا اعلان 15 اپریل کو کیا جائے گا۔ ٹیکس ایمنسٹی اسکیم کا اعلان آرڈینس کے ذریعے کیا جائے گا۔ ایمنسٹی اسکیم سے ایف بی آر کے اہداف حاصل کرنے میں بھی مدد ملے گی۔

 

ذرائع کے مطابق حکومت نے ایمنسٹی اسکیم سے 400 سے 500 ارب روپے ٹیکس اگٹھا ہونے کا تخمینہ لگایا ہے۔ نئی ایمنسٹی سکیم کا اعلان 15 اپریل کو کیا جائے گا۔ ٹیکس ایمنسٹی اسکیم کا اعلان آرڈینس کے ذریعے کیا جائے گا۔ ایمنسٹی اسکیم سے ایف بی آر کے اہداف حاصل کرنے میں بھی مدد ملے گی۔ ایف بی آر کو رواں مالی سال میں 350 سے 400 ارب روپے ٹیکس شارفاٹ فال کا سامنا ہے۔

 

تفصیلات کے مطابق سابق حکومت میں 2500 ارب روپے کا کالا دھن سفید کیا گیا۔ جس سے قومی خزانے کو ٹیکس کی مد میں 125 ارب روپے اکٹھا ہوئے۔ ایمنسٹی اسکیم میں بے نامی اثاثے ظاہر کیے جاسکیں گے۔ سرکاری افسران اور ان کی فیملی اسکیم سے مستفید نہیں ہو سکے گی۔ مجرمانہ نوعیت کے مقدمات میں ملوث افراد اسکیم سے فائدہ نہیں اٹھا سکیں گے۔

 

اسکیم میں انکم ٹیکس ریٹرن فائل کرنا لازمی شرط قرار دیا جائے گا۔ حکومت نے ٹیکس ایمنسٹی اسکیم سے فائدہ نہ اٹھانے والے افراد کے خلاف سخت کارروائیوں کا پلان بھی بنالیا۔ بے نامی جائیدادیں ضبط کی جائیں گی اور طریقہ کار کے تحط نیلام بھی کی جاسکتی ہیں۔

حارث افضل  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں