دشمن پر غالب آنے کے بعد معافی، 14سو سال پرانی روایت زندہ

دشمن پر غالب آنے کے بعد معاف کرنے کی 14 سو سال پرانی روایت زندہ ہو گئی۔ پاکستان نے قیدی پائلٹ کو بھارت کے حوالے کر دیا۔ پاکستان نے ثابت کر دیا کہ ہم ایک امن پسند، صلح جو اور بہادر قوم ہیں جو دشمن پر غالب آنے کے بعد بھی ضبط، برداشت، تحمل اور رواداری کا دامن نہیں چھوڑتے۔


پاک فوج کے سامنے سرنڈر کرنے والے بھارتی فضائیہ کے پائلٹ کو واپس لوٹا کر پاکستان نے بڑے پن کا ثبوت دے دیا۔ وزیراعظم عمران خان کے تاریخی اعلان کے بعد ابھی نندن کو سخت سکیورٹی میں واہگہ بارڈر لایا گیا۔ بھارتی ایئر اتاشی بھی سفری دستاویزات کے ساتھ لاہور پہنچے اور گرفتار پائلٹ کو اپنے ساتھ لے کر بھارت روانہ ہوئے۔ جہاں بھارتی فوجی حکام نے ابھی نندن کا استقبال کیا۔ ابھی نندن کی واپسی کے موقع پر ملکی و غیر ملکی میڈیا نمائندوں کی بڑی تعداد سرحد کے دونوں اطراف موجود رہی۔

 

واہگہ بارڈر پر پاکستان کی جانب معمول کی پریڈ ہوئی۔ پرچم اتارنے کی پر وقار تقریب میں عوام کا جوش وخروش دیدنی رہا جبکہ سرحد کے دوسری جانب سناٹا تھا۔ ابھی نندن کی واپسی کے موقع پر بھارت نے اپنے شہریوں کو پرچم اتارنے کی تقریب میں شرکت نہیں کرنے دی۔

پاکستان کے بڑے فیصلے پر بھارت کے عوام بھی خوش نظر آئے۔ واہگہ بارڈر پر تقریب میں شرکت کی اجازت تو نہ ملی بھارتی شہریوں نے ابھی نندن کی واپسی اور امن کے بڑے اقدام پر ڈھول کی تھاپ پر بھنگڑے ڈال کر خوشی کا اظہار کیا۔

پاکستان نے ثابت کر دیا کہ ہم ایک امن پسند، صلح جو اور بہادر قوم ہیں جو دشمن پر غالب آنے کے بعد بھی ضبط، برداشت، تحمل اور رواداری کا دامن نہیں چھوڑتے۔

حارث افضل  3 ماه پہلے

متعلقہ خبریں