25مارچ 1992ء جب پاکستان دنیائے کرکٹ کا سلطان بنا

25 مارچ 1992ء کو پاکستان دنیائے کرکٹ کا سلطان بنا، عمران خان کی مثالی قیادت نے گرین شرٹس کو ورلڈ کپ کی فتح سے ہمکنارکیا۔ میلبرن کے گراؤنڈ میں قومی ٹیم نے کس طرح انگلینڈ کو پچھاڑکرٹائٹل اپنے سرسجایا۔

کرکٹ کی تاریخ میں 25 مارچ سنہرادن، پاکستان کرکٹ ٹیم نے میلبرن کے گراؤنڈ میں انگلینڈ کو شکست دے کرحکمرانی کا تاج اپنے سرسجایا۔ 25 مارچ 1992ء کو عمران خان کی قیادت میں جیتے ہوئے ورلڈ کپ کو 27 برس بیت گئے۔

92 کے ورلڈ کپ میں قومی ٹیم مشکلات میں گھری رہی، ابتدائی ناکامیوں کے بعد پاکستان ٹیم ناک آؤٹ مرحلے میں پہنچی۔ قومی ٹیم نے سیمی فائنل میں فیورٹ ٹیم نیوزی لینڈ کو ہراتے ہوئے فائنل کا ٹکٹ کٹوایا تھا۔

1992ء کے فائنل ٹاکرے میلبرن کے گراؤند میں پاکستان نے پہلےکھیلتے ہوئے249 رنز بنائے۔ عمران خان کے مثالی 72 اورجاوید میاندادکے58 رنز نے اسکورکو آگے بڑھایا۔ وسیم اکرم اورانضمام الحق نے طوفانی بیٹنگ کھیلی۔ ہدف کے تعاقب میں انگلینڈ کی ٹیم69 رنز پر 3 وکٹیں گنوا بیٹھی۔

141 کے اسکورپے وسیم اکرم کی جادوئی باؤلنگ نے 2 وکٹیں لے کر فتح میں اہم کردار ادا کیا۔ پاکستانی باؤلرز کی عمدہ باؤلنگ کی بدولت پاکستان نے انگلینڈ کو 227 رنز تک ڈھیر کرتے ہوئے 22 رنز سے حکمرانی کا تاج اپنے سر سجا لیا۔

سوئنگ کے سلطان وسیم اکرم کو آل رؤانڈرکارکردگی پر میچ کا بہترین کھلاڑی قرار دیا گیا۔

احمد علی کیف  6 ماه پہلے

متعلقہ خبریں