ذمہ دار کان کھول کر سن لیں، وقت ایک سا نہیں رہتا: شہباز شریف

لاہور (پبلک نیوز) مسلم لیگ کے صدر اور پنجاب کے سابق وزیر اعلی شہباز شریف نے کہا ہے کہ ن لیگ کو بد ترین انتقام کا نشانہ بنایا جا رہا ہے۔ 2روز سے ہمارے کارکنوں کی گرفتاریاں جاری ہیں اور یہ گرفتاریاں انتخابات سے قبل دھاندلی ہے۔ ذمہ دار یاد رکھیں، ایسا وقت ہمیشہ نہیں رہنا۔

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انھوں مخالفین کو تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ ذمہ داران کان کھول کر سن لیں، وقت ایک سا نہیں رہتا۔ کارکنوں کو ایم پی او کے تحت بند کیا جا رہا ہے اور یہ گرفتاریاں انتخابات سے قبل دھاندلی ہے۔ انہوں نے کہا کہ نواز شریف کا مثالی استقبال کیا جائے گا۔ ہم پاکستان کی خدمت کرنے والے معمار ہیں۔ نوازشریف کے خلاف پراسیکیوشن میں کرپشن کا کوئی ٹھوس ثبوت نہیں ملا۔ مسلم لیگ ن کو دیوار سے لگانے کی سازش کی جا رہی ہے۔ نیب کورٹ کے فیصلہ کا صفحہ 171 یہ واضح طور پر بتاتا ہے کہ نواز شریف پر کوئی کرپشن کا الزام ثابت نہیں ہوا۔

شہباز شریف کا کہنا تھا کہ نیب کی جانب سے کہا گیا تھا کہ انتخابات تک کسی کو گرفتار نہیں کیا جائے گا علاوہ ازیں سپریم کورٹ نے بھی آج حکم دیا کہ 30جولائی تک کسی کو گرفتار نہیں کیا جائے گا، اس کے باوجود پنجاب میں ہمارے سیکڑوں کارکن گرفتار کیے جا چکے ہیں۔ اس کے باوجود ہم کل نواز شریف کا استقبال کرنے جائیں گے، اگر مجھے گرفتار کیا تو حمزہ شہباز قافلے کی قیادت کریں گے اور اگر حمزہ شہباز کو بھی گرفتارکر لیا گیا تو سلمان شہباز قیادت کریں گے۔ انھوں نے واضح کیا کہ مریم نواز کو محض اس بات کی سزا دی گئی جو 8 سال پر مشتمل ہے، کہ وہ میاں نواز شریف کی معاون تھیں۔ میاں نواز شریف تو وہ انسان ہیں جو اپنی بیمار اہلیہ کو اللہ کے سپرد کر کے واپس آ رہے ہیں۔

سابق وزیر اعلی کا کہنا تھا کہ جج کا فیصلہ ہے کہ نواز شریف کے خلاف کرپشن کا کوئی ثبوت نہیں۔ ان پر نا انصافی پر مبنی فیصلہ آیا۔ مریم کو بھی معاونت میں سزا سنائی گئی، بیگم کلثوم نواز موت اور زندگی کی کشمکش میں مبتلا ہیں۔ ن لیگ کو بد ترین انتقام کا نشانہ بنایا جا رہا ہے۔ انھوں نے یہ بھی کہا کہ یہ کانفرنس انتہائی عجلت میں بلائی گئی اور تمام شریک ہونے والوں کا شکریہ کہ وہ سب آئے۔

1 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں