ٹرمپ رواں ماہ کے آخری ہفتے میں کم جونگ ان سے ملاقات کیلئے تیار

پبلک نیوز: ٹرمپ  کو شمالی کوریا پر اعتبار نہیں اور مہینے کے آخر میں کم جونگ ان سے ملاقات کے لیے بھی تیار ہیں۔ اقوامِ متحدہ کی سکیورٹی کونسل کی رپورٹ کہتی ہے کہ شمالی کوریا میں  نیوکلیئر اور بیلسٹک ہتھیار برقرار ہیں اور وہ امریکی فوج سے چھپانے کے لیے ان کی منتقلی کر رہا ہے۔

 

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے 27 اور 28 فروری کو ویتنام میں کم جان انگ سے دوسری ملاقات کا اعلان کر دیا۔ ٹرمپ نے کہا کہ جزیرہ نما کوریا میں امن کے لیے تاریخی اقدامات کیے جا رہے ہیں۔ یرغمال بنائے جانے والے امریکی شہری بھی وطن واپس آرہے ہیں۔ جوہری ہتھیاروں کے تجربات رک گئے ہیں اور گزشتہ 15 ماہ سے شمالی کوریا نے کوئی میزائل تجربہ نہیں کیا۔

 

امریکی صدر کا کہنا ہے کہ اگر وہ صدر نہ ہوتے تو امریکا کی شمالی کوریا سے بڑی جنگ ہو رہی ہوتی۔ تو دوسری جانب اقوامِ متحدہ کی سکیورٹی کونسل کی شمالی کوریا سے متعلق خفیہ رپورٹ کی تفصیلات سامنے آئیں ہیں، جس  میں بتایا گیا ہے کہ عالمی پابندیاں بھی شمالی کوریا کے نیوکلیئر پرواگرام کو روکنے میں ناکام رہیں۔ شمالی کوریا میں تخفیفِ اسلحہ کے اقدامات محض ڈھونگ ہے۔ شمالی کوریا میں  نیوکلیئر اور بیلسٹک ہتھیار برقرار ہیں اور وہ امریکی فوج سے چھپانے کے لیے ان کی منتقلی کر رہا ہے۔

حارث افضل  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں