"کرپشن بچاؤ" تحریک والے اداروں پر دھاوا بولنے کی تیاریوں میں مصروف ہیں، عمر چیمہ

پبلک نیوز: نون لیگ، پیپلز پارٹی اور جمعیت علمائے اسلام کے مابین بڑھتی ہوئی قربتوں پر پاکستان تحریک انصاف کے مرکزی سیکرٹری اطلاعات نے سخت ردعمل دیتے ہوئے کہا ہے کہ "کرپشن بچاؤ" تحریک والے اداروں پر دھاوا بولنے کی تیاریوں میں مصروف ہیں۔

عمر چیمہ کی جانب سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا کہ زرداری اور مولانا سپریم کورٹ پر حملے کے نون لیگی تجربے سے فائدہ اٹھانا چاہتے ہیں۔ پہلے بلاول اور اب مولانا فضل الرحمان اس حوالے سے نواز شریف سے مشورہ کرنے پہنچے ہیں۔

انھوں نے کہا کہ بلاول نواز شریف سے ملاقات کے بعد عدالت میں پیش ہوئے تو پیپلز پارٹی نے نیب عدالت، پولیس اور صحافیوں پر حملہ کردیا۔ نیب نے حمزہ شہباز کو گرفتار کرنے کی کوشش کی تو نیب ٹیم پر تشدد کیا گیا۔ اب مولانا نواز شریف سے ہدایات لینے پہنچے ہیں کہ اگلا حملہ کب اور کہاں کرنا ہے۔

 

 

قمر زمان کائرہ دھمکیاں دے رہے ہیں کہ پچھلی پیشی پر جو ہوا وہ ٹریلر تھا، آئندہ اس سے بھی بڑھ کر ہوگا۔ شریفوں اور زرداریوں کے پاس عدالت کے سامنے اپنی صفائی کیلئے کہنے کو کچھ نہیں۔ مولانا انتخابات میں عبرتناک شکست کا بدلہ قوم اور ریاست سے لینا چاہتے ہیں۔ نواز-زرداری اور مولانا کا ٹرائیکا ریاستی اداروں پر دھاوا بولنے کی تیاریوں میں مصروف ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ واضح کردینا چاہتے ہیں ہر سازش کا منہ توڑ جواب دیں گے۔ کسی کرپٹ اور شرپسند سیاسی شعبدے باز کو سازش کی اجازت نہیں دیں گے۔ احتساب رکے گا نہ ہی کوئی فتنہ انگیزی برداشت کریں گے۔ ہر سیاسی حملے کا جواب دیں گے مگر اداروں پر یلغار کی کوشش گوارا نہیں کریں گے۔

احمد علی کیف  3 ماه پہلے

متعلقہ خبریں