چینی قونصل خانے پر حملہ کی تفتیش میں تاحال کوئی کامیابی نہ مل سکی

کراچی (حمزہ گیلانی) چینی قونصل خانے پر حملہ کی تفتیش میں تاحال کوئی کامیابی نہ مل سکی۔ بلوچستان حکومت کی جانب سے مارے جانے والے دہشتگردوں کا کرمنل ریکارڈ تفتیشی اداروں کو نہ مل سکا۔ سی ٹی ڈی حکام نے انسداد دہشتگردی کی عدالت میں واقعے کی رپورٹ پیش کر دی۔

تفصیلات کے مطابق 35 دن گزرنے کے باوجود چائنیز قونصل خانہ حملہ کیس میں کوئی پیشرفت نہ ہو سکی۔ سی ٹی ڈی حکام بھی ہاتھ پرہاتھ رکھ کربیٹھ گئے۔ اے کلاس رپورٹ  انسداد دہشتگردی کی عدالت میں جمع کرادی۔ مقدمے میں نامزد کوئی ایک دہشتگرد بھی قانون کی گرفت میں نہ آ سکا۔

رپورٹ میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ ہلاک دہشتگردوں سے کالعدم بلوچستان لبریشن آرمی کا جھنڈا برآمد ہوا تھا۔ تفتیشی حکام نے سوشل میڈیا پر چلنے والی مہم کو بھی بطور ثبوت رپورٹ میں پیش کیا۔

عدالت کےاستفسارپر تفتیشی نے بتایا کہ مرکزی ملزم اسلم اچھو کی افغانستان میں مارے جانے کی اطلاعات ہیں مگراس کی تصدیق نہیں ہو سکی۔ ہلاک دہشتگردعبدالرزاق کی تحویل سے شناختی کارڈ اور محکمہ زراعت بلوچستا ن کا کارڈ ملا تھا۔ نامزد ملزموں کے کرمنل ریکارڈ کے لیے بلوچستان سے طلب کی جانے والی تفصیلات تاحال موصول نہیں ہوئیں۔

رپورٹ میں سی ٹی ڈی حکام نے بتایا کہ بلوچ قوم پرست رہنما خیر بخش مری کے بیٹے حیربیارمری، رحمان گل، کمانڈر شیخو اور کمانڈر شیر دل کے خلاف انسداد دہشتگردی ایکٹ کے تحت مقدمات درج ہیں۔

احمد علی کیف  5 ماه پہلے

متعلقہ خبریں