نواز شریف کو فیملی سے ملاقات کی اجازت نہ دینا ڈکٹیٹر شپ کی علامت ہے: عظمیٰ بخاری

لاہور(پبلک نیوز) مسلم لیگ ن پنجاب کی سیکریٹری اطلاعات عظمیٰ بخاری کا کہنا ہے کہ خان بغض نواز الزام شریف میں آخری حد تک پہنچ گئے ہیں۔ شہباز شریف عمران خان، فردوس باجی اور شہباز گل کے روزانہ خوابوں میں آتے ہیں۔

 

مسلم لیگ ن پنجاب کی سیکریٹری اطلاعات عظمیٰ بخاری نے موجودہ حکومت کے حوالے سے بیان دیتے ہوئے کہا کہ شہباز شریف کی وطن واپسی کی خبر سن کر حکومتی ترجمانوں کی زبان کو تالے لگ گئے ہیں۔ شہباز شریف عمران خان، فردوس باجی اور شہباز گل کے روزانہ خوابوں میں آتے ہیں۔ نواز شریف سے عید پر بھی فیملی کو ملاقات کی اجازت نہ دینا ڈکٹیٹر شپ کی علامت ہے۔ نواز شریف نے ہمیشہ جیل میں نہیں رہنا اور نہ عمران خان نے ہمیشہ وزیراعظم ہاﺅس میں رہنا ہے۔ عوام اس نااہلوں کے ٹولے کو مزید برداشت نہیں کر سکتی۔

 

عظمیٰ بخاری نے کہا کہ ہم کنٹینر پر نہیں چھڑیں گے عوام ان نالائقوں کو خود اسمبلی سے اٹھا کر باہر پھینکیں گے۔ قوم کو مزید غریب دشمن تبدیلی کی ضرورت نہیں رہی، کیونکہ تبدیلی لانے والے بھی اب تبدیلی کا خمیازہ بھگت رہے ہیں۔ جلد تبدیلی کے غبارے سے ہوا نکل جائے گی اور عمران خان ملک سے فرار ہو جائیں گے۔ عمران خان کے آﺅٹ ہونے کے بعد پی ٹی آئی خود ہی ختم ہو جائے گی۔ موسمی پریندے دوبارہ اپنے گھونسلوں میں چھپ جائیں گے۔

عطاء سبحانی  3 ماه پہلے

متعلقہ خبریں