آصف زرداری نے فریال تالپور کے آگے آنے پر سیکیورٹی اہلکار کو چھڑی دے ماری

 

اسلام آباد (پبلک نیوز) احتساب عدالت نے آصف زرداری اور فریال تالپور کے جوڈیشل ریمانڈ میں 19 ستمبر تک توسیع کر دی ہے۔ آصف زرداری نے فریال تالپور کے آگے آنے پر سیکیورٹی اہلکار کو چھڑی سے پیچھے ہٹایا۔

 

تفصیلات کے مطابق پارک لین اورمنی لانڈرنگ ریفرنسز کے ملزموں سابق صدرآصف زرداری اور فریال تالپور کو جوڈیشل ریمانڈ مکمل ہونے پر احتساب عدالت میں پیش کیا گیا۔ ملزموں کو ڈیوٹی جج راجہ جواد عباس کی عدالت میں پیش کیا گیا۔

 

جج راجہ جواد عباسی کا ریمارکس دیتے ہوئے کہنا تھا کہ ریفرنسز پر باقاعدہ سماعت متعلقہ جج ہی کریں گے۔ عدالت نے حاضری لگا کرآصف زرداری اور فریال تالپورکو واپس بھیجنے کا حکم دے دیا۔ عدالت نے سماعت انیس ستمبر تک ملتوی کردی۔

 

احتساب عدالت پیشی کے وقت آصف زرداری اس وقت غصے میں آگئے جب ایک سیکیورٹی اہلکار فریال تالپور کے سامنے آ گیا۔ آصف زرداری نے فریال تالپور کے آگے آنے پر سیکیورٹی اہلکار کو چھڑی سے پیچھے ہٹایا اور غصے سے کہا کہ دیکھتے نہیں ہو میری بہن پیچھے کھڑی ہے۔

 

میڈیا سے گفتگو میں سابق صدر آصف زرداری نے یوم دفاع کے موقع پر پیغام بھی دیا اور کشمیریوں سے یکجہتی کا اظہار بھی کر دیا۔ اہم پیشی کے موقع پر سابق وزرائے اعظم یوسف رضا گیلانی، راجہ پرویزاشرف سمیت دیگر پیپلزپارٹی رہنما بھی جوڈیشل کمپلیکس میں موجود تھے۔

 

احمد علی کیف  2 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں