صبا قمر کے بوائے فرینڈ پر متعدد خواتین کو ہراساں کرنیکا الزام

ویب ڈیسک: کچھ روز قبل خبریں سامنے آئیں تھیں کہ پاکستان میں صفِ اول کی اداکارہ صبا قمر شادی کرنے والی ہیں۔ ان کی جیون ساتھ کے حوالے سے تلاش مکمل ہو گئی ہے۔ انھوں نے اس بات کی تصدیق بھی کر دی ہے۔

سماجی رابطوں کی فوٹو شیئرنگ ایپ انسٹاگرام پر انھوں نے کچھ قبل اپنے ایک فوٹو شوٹ کی تصویر شیئر کی۔ بولڈ فوٹو شوٹ کی وجہ سے ان کو کافی تنقید کا نشانہ بنایا گیا۔ ان کی اسی تصویر پر عظیم نامی صارف نے بجائے تنقید کرنے کے، کمنٹ کیا کہ اس سال شادی ناں کر لیں، جس پر اداکارہ نے “قبول ہے” کہا تو سوشل میڈیا پر کہرام بپا ہو گیا۔

اس حوالے سے ایکسپریس ٹریبیون کی رپورٹ کے مطابق صبا قمر نے تصدیق کر دی تھی کہ وہ شادی کرنے جا رہی ہیں۔ انھوں نے اپنے ہونے والے دولھا کے بارے میں بتایا کہ یہ وہی سوشل میڈیا صارف عظیم ہے جس کو انھوں نے قبول ہے کہا تھا۔

واضح رہے کہ عظیم خان ایک بلاگر ہیں۔ انسٹاگرام پر ان کی فین فالوونگ بھی کافی ہے۔ تاہم حال ہی میں ایک سوشل میڈیا صارف نے ان پر تنقید کی ہے جس میں خاتون نے ان پر ہراساں کرنے کا الزام لگایا ہے۔ اجالا لینڈ نامی انسٹا اکاونٹ سے الزام لگایا گیا کہ عظیم خان کی وجہ سے میں اذیت میں مبتلا رہی ہوں اور مجھے کئی ریپ اور قتل کی دھمکیاں مل رہی ہیں۔

صارف نے صبا قمر کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ وہ اداکارہ کی فین ہیں، اکاونٹ میں صبا سے درخواست کی گئی کہ وہ اس شخص کے ساتھ زندگی بسر کرنے سے قبل ایک دفعہ ضرور سوچیں۔ صارف اجالا نے اپنی طویل پوسٹ میں کہا کہ وہ ایک ایسی خاتون کی حمایت نہیں کر سکتیں جو ایسے مرودں کے ساتھ کھڑی ہوں۔


جواب میں عظیم خان کا اپنے ویڈیو پیغام میں کہنا تھا کہ محبت اور نیک تمناوؤں کا اظہار کرنے والے افراد کا شکریہ۔ ایسا نہیں ہو سکتا کہ برسات ہو اور برساتی کیڑے باہر نہ آئیں۔

عظیم خان نے صارف سے سوال کرتے ہوئے کہا کہ اپنی شہرت اور مقبول بننے کے لئے کسی کی زندگی کو کیوں برباد کررہے ہیں؟ہم نکاح کریں گے، ایسا کرنے کا کیامقصد ہے آپ کا اور کیا فائدہ ہو گا؟ ان کی اس پوسٹ کے جواب میں صبا قمر نے بھی انکی حمایت کی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں