برطانوی ارب پتی کا جیف بیزوس سے پہلےخلا میں جانیکا اعلان

لندن(ویب ڈیسک)دنیا کے امیر ترین افراد خلا بازی کے جنون میں مبتلا ہو گئے ہیں اور اس کے لیے سب سے پہلےخلاء میں جانے کی ریس بھی لگی ہوئی ہے. کچھ روز قبل ایمیزون کے بانی جیف بیزوس کی جانب سے بھی اپنے بھائی اور دیگر چار افراد کے ہمراہ خلاء میں جانے کا اعلان کیا گیا تھا.

ادھر برطانوی ارب پتی رچرڈ برینسن کی جانب سے اعلان کیا گیا ہے کہ وہ جیف بیزوس سے بھی پہلے خلا کا سفر اختیار کریں گے۔ برطانوی ارب پتی کا کہنا تھا کہ وہ جیف بیزوس سے 9 دن قبل خلاء میں جائیں‌گے.

برینسن کی کمپنی ورجن گالیکٹک نے ایک بیان میں کہا ہے کہ وہ اسپیس شپٹو یونٹی میں سوار ایک “مشن ” ہوگا ، جو 11 جولائی تک “خلائی موسم اور تکنیکی جانچ پڑتال” کے بعد خلا میں جائے گا۔شیڈول کے مطابق رچرڈ برینسن بیزوس سے پہلے خلا میں داخل ہوجائیں گے ، جن کا کہنا تھا کہ وہ 20 جولائی کو اپنی کمپنی بلیو اوریجن سے تعلق رکھنے والی نیو شیپرڈ لانچ پر سوار ہو کر خلائی سفر کریں گے۔

دونوں ارب پتی افراد نے سیاحوں کو سب آربیٹل سپیس میں مختصر پروازوں پر جانے کے لئے حریف کمپنیاں قائم کیں۔ برچرڈ برینسن خود خلابازی کے تجربے کا جائزہ لیں گے۔ ورجن گیلکٹک کے ذریعے مستقبل میں خلابازوں کی تربیت کی جائے گی۔ ورجن گیلکٹک نے کہا ، “کمپنی اپنے مستقبل کے خلابازوں کے لئے سفر کو بڑھانے کے لئے اپنی پرواز کی تربیت اور اسپیس لائٹ کے تجربے سے اپنے مشاہدات کا استعمال کرے گی۔”

کمپنی پروازوں کا سلسلہ جاری رکھنے کا ارادہ رکھتی ہے۔

ورجن گیلکٹک کا خلائی جہاز کوئی کلاسیکی راکٹ نہیں ہے، بلکہ ایسا کیریئر ہوائی جہاز ہے جو اونچائی تک پہنچتا ہے اور ایک چھوٹا خلائی جہاز اس میں سے چھوڑتا ہے، جو اپنے انجنوں کو فائر کرتا ہے اور سب آربیٹل خلا تک پہنچ جاتا ہے ، پھر زمین پر واپس چلا جاتا ہے۔ برینسن نے کہا ، “میں واقعتا مانتا ہوں کہ خلاء ہم سب کی ہے۔

ورجن گلیٹک کے مطابق ، اس پرواز کے بعد 2022 میں باقاعدہ تجارتی پروازوں کے آغاز سے پہلے دو اور ٹیسٹ متوقع ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں