حلیم عادل شیخ کے قافلہ پر بلاول ہاؤس کے سامنے حملہ

کراچی (ویب ڈیسک) پاکستان تحریک انصاف سندھ کے آفیشل ہینڈل سے ٹویٹ میں لکھا گیا ہے کہ اپوزیشن لیڈر سندھ اسمبلی اور پاکستان تحریک انصاف کے سینئر رہنما حلیم عادل شیخ کے قافلہ پر بلاول ہاؤس نوابشاہ کے گیٹ پر حملہ ہوا۔ اسد زرداری، عمران زرداری، بابو ڈومکی اور دیگر نے فائرنگ کی جبکہ گاڑی پر پتھراؤ بھی کیا گیا۔


اس حوالے سے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ حلیم عادل شیخ نے لکھا کہ یہ اصل بھٹو نہیں زرداری کے پجاری ہیں۔ میں بیٹھا ہوں نوابشاہ بلاول کے باپ یا نانا میں طاقت ہے تو آجائیں۔ گزشتہ روز آئی جی سندھ کو سکیورٹی کے لیے خط بھی لکھا گیا تھا مگر پی پی آئی جی کی جانب سے سکیورٹی فراہم نہیں کی گئی۔


انھوں نے مزید لکھا کہ آصف زرداری اور بلاول زرداری کے لیے شرم کا مقام ہے، آج مجھ پر نوابشاہ میں اپنے غنڈے سے حملہ کروایا، فائرنگ اور پتھراؤ کیا گیا۔ فرزند زرداری یاد رکھیں ہر فورم پر انہیں بے نقاب کروں گا۔


وفاقی وزیر اسد عمر نے کہا کہ آئی جی سندھ کو فوری طور پر لیڈر آف اپوزیشن حلیم عادل شیخ کی گاڑی پر پتھراؤ کا نوٹس لینا چاہئے اور فوری طور پر حملہ کرنے والے لوگوں کو گرفتار کرنا چاہیے۔


وفاقی وزیر مراد سعید نے کہا کہ سندھ کے اپوزیشن لیڈر حلیم عادل شیخ پر زرداری ہاؤس کے سامنے حملے کی شدید مزمت کرتے ہیں۔ اس قسم کے اوچھے ہتکھنڈوں سے نہ آپکی نا اہلی چھپ سکتی ہے نہ ہمارے کارکنوں کے حوصلے پست۔ انکا خوف بتا رہا ہے کہ تبدیلی کی ہوا چل پڑی۔ انشاءاللہ جلد سندھ سے زرداری لیگ کی سیاست کا خاتمہ ہوگا۔


وزیراعظم کے معاون خصوصی شہباز گل نے کہا کہ اپوزیشن لیڈر سندھ اسمبلی حلیم عادل شیخ کے قافلے پر بلاول ہاؤس نوابشاہ کے گیٹ پر حملے کی شدید مزمت کرتے ہیں۔ پیپلزپارٹی سندھ میں بوکھلاہٹ کا شکار ہوکر پی ٹی آئی رہنمائوں پر حملے کروا رہی ہے۔ مسلسل شکست کے بعد بلاول زرداری کو سندھ میں بھی شکست دکھائی دے رہی ہے۔


گورنرسندھ عمران اسماعیل نے کہا کہ اپوزیشن لیڈر حلیم عادل شیخ کو کچھ ہوا تو اس کی تمام تر ذمہ داری صوبائی حکومت پر ہوگی۔ واقعہ میں ملوث عناصر کو ہر صورت قانو ن کی گرفت میں لایا جائے۔ اس طرح کے واقعات کو کسی بھی صورت برداشت نہیں کیا جا سکتا ہے۔

انھوں نے مزید کہا کہ صوبہ کا امن خراب کرنے کی مذموم کوشش ہے۔ سیاسی مخالفین کو ظلم و جبر کے ذریعہ دبانے کی مکروہ سازش ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں