تحریک انصاف حکومت کے دوسرے مالی سال کی آڈٹ رپورٹ جاری

کراچی (پبلک نیوز) موجودہ حکومت کے دوسرے مالی سال 21-2020 کی آڈٹ رپورٹس۔ وفاقی وزارتوں اداروں اور محکموں میں 404 ارب 62 کروڑ روپے سے زائد کی مالی بے ضابطگیوں کا انکشاف۔ پبلک سیکٹر انٹرپرائزز میں ایک ارب 30 کروڑ روپے کی خوردبرد ہوئی۔

آڈٹ رپورٹ کے مطابق وفاقی حکومت کے سول اخراجات میں 268 ارب 87 کروڑ روپے سے زائد کی بے ضابطگیوں کا انکشاف ہوا ہے۔ پبلک سیکٹر انٹرپرائزز میں 135 ارب 75 کروڑ روپے سے زائد کی مالی بے ضابطگیوں کا انکشاف ہوا ہے۔ وزارت خزانہ کے مالی حسابات میں 136 ارب 82 کروڑ روپے کی بے ضابطگیوں کا انکشاف ہوا ہے۔ وزارت بین الصوبائی رابطہ کے حسابات میں 21 ارب 20 کروڑ روپے کی بے ضابطگیوں کا انکشاف ہوس ہے۔ وزارت اطلاعات میں 21 ارب 9 کروڑ روپے کی بے ضابطگیوں کا انکشاف ہوا ہے۔

وزارت بحری امور میں 31 ارب 38 کروڑ روپے کی بے ضابطگیوں کا انکشاف ہوا ہے۔ وزارت داخلہ میں 7 ارب 53 کروڑ روپے کی بے ضابطگیوں کا انکشاف ہوا ہے۔ نجکاری ڈویژن میں 3 ارب 47 کروڑ روپے کی بے ضابطگیاں ہوئیں۔ وزارت سائنس اور ٹیکنالوجی میں تین ارب 34 کروڑ روپے سے زائد کی مالی بے ضابطگیوں کا انکشاف ہوا ہے۔ وزارت تعلیم کے حسابات میں 8 ارب 60 کروڑ روپے کی مالی بے ضابطگیوں کا انکشاف ہوا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں