ملک بھر میں مزید بارشوں کی پیشگوئی:محکمہ موسمیات

اسلام آباد(پبلک نیوز)‌محکمہ موسمیات کے مطابق مون سون ہوائیں ملک کے بالائی علاقوں میں شدت کے ساتھ داخل ہونا شروع ہو چکی ہیں. آئندہ 2 سے 3 روز میں کشمیر، اسلام آباد، راولپنڈی، اٹک، چکوال اور جہلم میں بارش کا امکان ہے جبکہ گجرات، منڈی بہاؤالدین،سیالکوٹ، نارووال، گوجرانوالہ اور حافظ آباد میں بھی بادل برسیں گے.

محکمہ موسمیات کے مطابق لاہور، اوکاڑہ، ساہیوال، جھنگ، ٹوبہ ٹیک سنگھ ،فیصل آباد ، سر گودھا اور میا نوالی میں بارش کی پیشگوئی ہے جبکہ کوہستان، شانگلہ، مانسہرہ، ایبٹ آباد، ہری پور، مردان، چارسدہ، نوشہرہ، دیر اور چترال میں بھی بارش کا امکان ہے. پشاور،کوہاٹ ،وزیرستان،ٹانک ،کرک، بنوں،ڈیرہ اسماعیل خان، بھکراور لیہ میں بارش کا امکان ہے، گلگت بلتستان میں غذر، استوار، دیامیر، سکردو، گلگت، ہنزہ ،نگر، گانچی اورخرمنگ میں بھی گرج چمک کے ساتھ بادل برسیں گے.

محکمہ موسمیات کے مطابق 5اگست کی شام سے 17 اگست کے دوران ڈیرہ غازی خان،راجن پور، خانپور اور رحیم یار خان میں بارش کا امکان ہے اور ملتان، بہاولپور، بہاولنگر، سکھر، لاڑکانہ، جیکب آباد، دادو، شہید بینظیر آباد، میر پور خاص میں بھی بارش متوقع ہے. نصیر آباد، جعفر آباد، کوہلو، لورالائی ، بارکھان، ژوب، زیارت، کوئٹہ،مستونگ، خضداراور قلات میں بھی بارش کی بھی توقع ہے جبکہ 14 اور 15 اگست کے دوران بارشوں کے باعث شانگلہ، بونیر، بٹگرام،مانسہرہ، بالاکوٹ، ایبٹ آباد،سوات، کوہستان ، کشمیر ،اسلام آباد، راولپنڈی،نارووال اور سیالکوٹ کے ندی نالوں میں ریلوں کا خدشہ ہے. 15 اور 16 اگست کو ڈیرہ غازی خان اور مشرقی بلوچستان کے مقامی اور برساتی ندی نالوں میں طغیانی کا خدشہ ہے اور راولپنڈی، گوجرانوالہ،لاہور،فیصل آباد اور پشاور میں نشیبی علاقے زیر آب آنے کا خدشہ ہے. بارشوں کے باعث کشمیر، گلگت بلتستان اور بالائی خیبر پختونخوا میں لینڈ سلائینڈنگ کا خطرہ ہے. محکمہ موسمیات نے تمام متعلقہ اداروں کو الرٹ رہنے کی ہدایت کی ہے.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں