نیب لاہور کے آخری 4 سال

نیب لاہور کمپلینٹ سیل کی مجموعی کارکردگی رپورٹ جاری منظر عام پر آ گئی۔ جس میں بتایا گیا کہ ڈائریکٹر جنرل نیب لاہور کے عوام دوست اقدامات کیے گئے۔

نیب لاہور کی رپورٹ میں کہا گیا کہ سال 2017 سے تاحال عوام کی دادرسی پر مبنی ریکارڈ ساز کارکردگی کا غیر معمولی مظاہرہ کیا گیا۔ نیب لاہور کمپلینٹ سیل کو گزشتہ 4 سالوں میں مجموعی طور پر 43120 شکایات موصول ہوئیں جن میں سے 42249 شکایات کو مکمل کرتے ہوئے تاریخ رقم کی گئی۔

ماضی کے 17 سالہ دور (1999 تا 2016) میں نیب لاہور کو کل 45314 شکایات موصول ہوئیں۔ 44495 شکایات کو ان 17 سالوں کے دوران مکمل کیا گیا۔ گزشتہ 4 سالوں (اگست 2017 سے تاحال) کے دوران نیب لاہور کمپلینٹ سیل کو ملنے والی شکایات میں سالانہ 304 فیصد اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔

فی الوقت نیب لاہور CV سیل 1690 شکایات پر اپنے آئینی و قانونی اقدامات جاری رکھے ہوئے ہے۔ کمپلینٹ سیل کو 2017 میں کل 5964 شکایات موصول ہوئیں جبکہ بیک لاگ عبور کرتے ہوئے کل 6373 کو مکمل کیا گیا۔

اسی طرح 2018 میں کل 10197 شکایات موصول ہوئیں جن میں سے 9305 کو مکمل کیا گیا۔ 2019 میں کسی ایک سال کے دوران سب سے زیادہ 14003 شکایات موصول ہوئیں جن میں سے 10648 کو مکمل کرلیا گیا۔

گزشتہ سال 2020 میں نیب لاہور کو کل 5016 شکایات موصول ہوئیں تاہم بیک لاگ کم کرتے ہوئے کل 9485 شکایات کو پایہ تکمیل تک پہنچا دیا گیا۔ رواں سال 2021 میں کل 7940 متاثرین نے دادرسی کیلئے کمپلینٹ سیل کا رخ کیا جبکہ ان میں سے 6348 متاثرین کی شکایات پر کارروائی کو مکمل کیا جا چکا ہے۔

نیب لاہور کمپلینٹ سیل کی جانب سے گزشتہ 4 سالوں میں 70 فیصد سالانہ اضافہ کیساتھ کل 1062 کمپلینٹ ویری فکیشن کا آغاز کیا گیا۔ ان 1062 سی ویز میں سے کل 1038 شکایات پر تحقیقات (CVs) کو مکمل بھی کر لیا گیا۔

ماضی کے 17 سالہ دور میں کل 2648 شکایات پر تحقیقات کی منظوری دی جا سکی جبکہ 2540 کو پراسیس کیا گیا۔ موجودہ قیادت کے زیر انتظام سال 2017 میں کل 257 سی ویز کی منظوری فراہم کی گئی جبکہ اس دوران کل261 کو مکمل کیا گیا۔

اسی طرح 2018 کے دوران 326 کمپلینٹ ویری فکیشن کی منظوری دی گئی جن میں سے 280 کو مکمل بھی کر لیا گیا۔ بعد ازاں 2019 میں کل 243 کمپلینٹ ویری فکیشن کی منظوری دی گئی جبکہ کل 257 کو پایہ تکمیل تک پہنچایا گیا۔

2020 میں کل 151 سی ویز پر کارروائی کا آغاز کیا گیا تاہم بیک لاگ کو عبور کرتے ہوئے کل 169 کو مکمل کیا گیا۔ رواں سال 2021 کے دوران 85 کمپلینٹ ویری فیکیشنز کی قانون کیمطابق منظوری دی جاچکی ہے جبکہ تاحال 71 سی ویز کو مکمل بھی کر لیا گیا۔

ڈی جی نیب لاہور کی سربراہی میں دیگر ونگز کی مانند کمپلینٹ سیل کی سالانہ مجموعی کارکردگی میں بھی روز افزوں اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔ نیب لاہور کیجانب سے کمپلینٹ ویری فکیشنز کو مکمل کرتے ہوئے شکایات کو انکوائری کے مراحل میں داخل کرنے میں برق رفتاری کا مظاہرہ نظر آیا۔

نیب لاہور نے 2017 میں 68 سی ویز پر انکوائریاں شروع کیں۔ 2018 میں 205جبکہ 2019 میں 106 انکوائریوں کا آغاز ہوا۔اسی طرح 2020 میں کل 53 نئی انکوائریاں منظور کی گئیں جبکہ 2021 کے دوران تاحال 24 انکوائریوں کی منظوری دی جا چکی ہے۔

چیئرمین نیب جسٹس جاوید اقبال کی لازوال قیادت اور ڈی جی نیب لاہور کی سنجیدہ کوششوں کے سبب نیب لاہور کی کارکردگی میں ماضی کی نسبت سینکڑوں گنا اضافہ ریکارڈ کیا۔ 4 سالہ دور میں نیب لاہور کیجانب سے ہاؤسنگ سیکٹر کے مقدمات، اختیارات کے ناجائز استعمال و بدعنوانی کے دیگر مقدمات میں متعدد اہم پیش رفت منظر عام پر آئیں۔

ڈی جی نیب لاہور کی انتھک محنت اور کوششوں کے باعث متاثرکن اقدامات نیب کی مجموعی کارکردگی میں بہتری کا باعث بنے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں