افغانستان صورتحال:’ہم حل کی طرف آگے بڑھ رہے ہیں‘

دوشنبے (پبلک نیوز) پاکستان کے وفاقی وزیر برائے اطلاعات و نشریات چودھری فواد حسین نے کہا ہے کہ افغانستان کی صورتحال میں پاکستان کلیدی کردار ادا کر رہا ہے۔ ہم ایک حل کی طرف آگے بڑھ رہے ہیں۔ افغانستان کے استحکام کے لئے تمام ہمسائیوں نے مل کر اپنی کوششیں جاری رکھنے کا عزم کر رکھا ہے۔

وزیراعظم کے دورہ تاجکستان کے حوالے سے اہم گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ شنگھائی تعاون تنظیم کے سربراہ اجلاس کے موقع پر ہماری دوررس ملاقاتیں ہوئیں۔ بیلارس، ازبکستان، ایران اور قازقستان کے صدور کے ساتھ ہماری ملاقاتیں ہوئیں۔

انھوں نے بتایا کہ وزیراعظم عمران خان سربراہان مملکت کے اعزاز میں دیئے گئے عشایئے میں بھی شرکت کر رہے ہیں۔ زیادہ فوکس افغانستان پر رہا ہے، دلچسپ نکتہ ہائے نظر سننے کو ملا ہے۔ ریجن کے تمام رہنما اس بات پر متفق ہیں کہ افغانستان میں استحکام کیلئے افغانستان کو تنہاءنہ چھوڑا جائے۔

ان کا کہنا تھا کہ ہمیں افغانستان کے ساتھ مل کر کام کرنا ہوگا، افغانستان میں جامع حکومت کے لئے ہمیں آگے بڑھنا ہوگا۔ اس بات پر تمام فریقین کا اتفاق ہے کہ افغانستان کے عوام کو تنہا نہ چھوڑا جائے۔

مزید کہا کہ افغانستان دوراہے پر کھڑا ہے، ہم نے رہنماﺅں کو باور کرایا ہے کہ افغانستان یا تو استحکام کی طرف جائے گا اور اگر ایسا نہ ہوا تو پورے خطے کے لئے خطرناک ہوگا، اس صورتحال کا تمام لیڈر شپ کو ادراک ہے۔

فواد چودھری کا کہنا تھا کہ ترکمانستان، ازبکستان، قازقستان، ایران اور پاکستان کے سربراہان یہاں موجود ہیں، کل چین کے وزیر خارجہ بھی یہاں آ رہے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں