نیوزی لینڈ کے بعد انگلینڈ کا بھی پاکستان دورہ ختم

ویب ڈیسک: نیوزی لینڈ کے دورہ پاکستان منسوخ کرنے کے بعد انگلینڈ کی جانب سے بھی پاکستان کا دورہ ختم کرنے کا اعلان کر دیا گیا ہے۔

سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر انگلینڈ کرکٹ بورڈ کے آفیشل ٹوئٹر ہینڈل سے باقاعدہ طور پر اعلان کیا گیا ہے۔ جاری کردہ علانیہ ٹویٹ میں کہا گیا ‘ہم تصدیق کر سکتے ہیں کہ بورڈ نے دونوں ٹیموں کے اکتوبر میں دورے سے دستبردار ہونے کا فیصلہ کیا ہے۔’

انگلیش کرکٹ بورڈ نے دورہ پاکستان ختم کرنے کے باضابطہ اعلان میں کہا کہ انگلینڈ اینڈ ویلزکرکٹ بورڈ کی جانب سے مینز اور ویمنز دونوں ٹیموں کے دورے ختم کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔

انگلش کرکٹ بورڈ نےجاری بیان میں کہا کہ کھلاڑیوں اور سپورٹ اسٹاف کی حفاظت اور ذہنی صحت اولین ترجیح ہے۔ اس بات کا بھی اندازہ ہے کہ دورہ ختم کرنے کے فیصلہ سے پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کو مایوسی کا سامنا ہو گا۔ کیونکہ پی سی بی کی جانب سے پاکستان میں بین الاقوامی کرکٹ کی واپسی اور بحال کی غرض سے انتھک محنت اور کوششیں کی گئیں۔ پی سی بی کا پچھلے دو مہینوں میں انگلش کرکٹ سے کیا گیا تعاون دوستی کی واضح مثال ہے۔


کہا گیا کہ دورہ ختم کرنے کے فیصلہ سے پڑنے والے اثرات پر معذرت خواہ ہیں اور 2022 کے لیے اپنے دورہ پر توجہ مرکوز کر رہے ہیں۔ موجودہ صورتحال میں دورہ کرنا کھلاڑیوں کے لیے آئیڈیل نہیں ہو گا۔


چیئرمین پی سی بی رمیزراجہ نے ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ انگلینڈ کرکٹ بورڈ کے فیصلے پر مایوسی ہوئی۔ انگلینڈ اس وقت سیریز سے دستبر دار ہوا جب ہمیں زیادہ ضرورت تھی۔ ہم اپنی کرکٹ جاری رکھیں گے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں