سابق بھارتی کرکٹر جدیجہ کورونا کی وجہ سے چل بسے

راجکوٹ: بھارتی کرکٹ ن ٹیم نے اپنے ایک سابق کرکٹر کو کھو دیا۔ ہندوستان کے سابق کرکٹر امباپرت سنگھ جی جدیجہ کی منگل کو کووڈ-19 انفیکشن کی وجہ سے موت ہوگئی۔ ان کی عمر 69 برس تھی۔ سوراشٹرا کرکٹ ایسوسی ایشن (SCA) نے ان کے بارے میں افسوسناک خبر کی اطلاع دی۔

سوراشٹرا کرکٹ ایسوسی ایشن (SCA) نے ایک بیان میں کہا، ‘سوراشٹر کرکٹ ایسوسی ایشن میں ہر کوئی سابق سوراشٹر کرکٹر امباپرتاپ سنگھ جی جدیجہ کے انتقال پر سوگ میں ہے۔ کووڈ-19 سے لڑتے ہوئے آج صبح ان کی موت ہوگئی،’ امباپرتاپ سنگھ جی جدیجا جام نگر کے رہنے والے تھے. وہ میڈیم پیسر گیند باز اور دائیں ہاتھ کے بلے باز تھے۔ انہوں نے رنجی ٹرافی میں سوراشٹرا کے لیے آٹھ میچ کھیلے۔ جدیجہ گجرات پولیس کے ریٹائرڈ ڈی ایس پی بھی تھے۔ جڈیجہ نے آٹھ رنجی میچوں میں 11.11 کی اوسط سے 100 رنز بنائے۔ اس کے ساتھ ہی، گیند بازی میں، انہوں نے 17 کی اوسط سے 10 وکٹیں حاصل کیں۔ انہوں نے سوراشٹرا کی نمائندگی کرتے ہوئے آٹھ رنجی ٹرافی میچ کھیلے۔

کرکٹ بورڈ آف انڈیا (بی سی سی آئی) کے سابق سکریٹری نرنجن شاہ نے ایک تعزیتی پیغام میں کہا، ‘امبپرتاپ سنگھ جی ایک شاندار کھلاڑی تھے اور میری ان سے کرکٹ پر کئی بار اچھی بات چیت ہوئی ہے۔ خدا اس کی روح کو سکون میں رکھے۔ واضح رہے کہ گزشتہ سال بھی کئی موجودہ اور سابق کرکٹرز کی کورونا کی وجہ سے موت ہوئی تھی۔ اس میں راجستھان کے لیے ڈومیسٹک کرکٹ کھیلنے والے 36 سالہ لیگ اسپنر وویک یادو بھی شامل تھے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں