مبینہ زیادتی کیس، قومی کرکٹر یاسر شاہ بے گناہ قرار

اسلام آباد: (ویب ڈیسک) قومی ٹیسٹ کرکٹر یاسر شاہ کو مبینہ زیادتی مقدمے میں بے گناہ قرار دیتے ہوئے ان کا نام ایف آئی آر سے خارج کر دیا گیا ہے۔

پولیس حکام کے مطابق مدعی مقدمہ متاثرہ لڑکی نے اپنے حلفیہ بیان میں کہا ہے کہ اس نے غلط بیانی کی وجہ سے قومی کرکٹر یاسر شاہ کا نام ایف آئی آر میں درج کرایا تھا۔

اسلام آباد کے تھانہ شالیمار کے ایس ایچ او نے کہا ہے کہ کرکٹر یاسر شاہ کا اس مقدمے سے کسی قسم کا کوئی تعلق نہیں ہے۔ متاثرہ خاتون نے بھی یاسر شاہ کا نام ایف آئی آر سے نکالنے کا کہا جس کے بعد ایف آئی آر کی ضمنی رپورٹ جاری کر دی گئی ہے۔

خیال رہے کہ گذشہ روز اسلام آباد کی مقامی عدالت میں قومی ٹیسٹ کرکٹر یاسر شاہ کے دوست فرحان کی جانب سے مبینہ طور پر لڑکی کیساتھ زیادتی کے کیس کی سماعت ہوئی۔

عدالت کی جانب سے کیس کے مرکزی ملزم فرحان الدین کی ضمانت قبل از گرفتاری مسترد کی گئی۔ جس کے بعد ملزم کمرہ عدالت سے فرار ہوگیا، جبکہ پولیس بھی اسے گرفتار کرنے میں ناکام رہی۔

واضح رہے کہ 14 سالہ لڑکی کے ماموں نے یاسر شاہ اور ان کے دوست کے خلاف زیادتی کا مقدمہ درج کروایا تھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں