لیگی ایم پی اے بلال یاسین پر فائرنگ کیس میں اہم پیش رفت

لاہور (پبلک نیوز) لیگی ایم پی اے بلال یاسین پر فائرنگ کیس میں انتہائی اہم پیش رفت سامنے آئی ہے۔

ترجمان پنجاب پولیس نے کہا ہے کہ لاہور سی آئی اے پولیس نے بلال یاسین پر فائرنگ کرنے والے دونوں شوٹرز کو گرفتار کرلیا ہے۔ وزیر اعلی پنجاب سردار عثمان بزدار اور آئی جی پنجاب راؤ سردار علی خان خود اس کیس کی نگرانی کر رہے تھے۔ سی سی پی او لاہور اور ڈی آئی جی انویسٹی گیشن نے 16 ٹیمیں ملزمان کو ٹریس کرنے اور گرفتار کرنے کیلئے تشکیل دیں تھیں۔

ترجمان پنجاب پولیس کے مطابق رات گئے سی آئی اے پولیس نے خفیہ اطلاع پر کاروائی کرتے ہوئے 10 مختلف مقامات پر چھاپے مارے۔ ملزمان کو شاہدرہ کے علاقے سے خفیہ آپریشن کے بعد گرفتار کیا گیا۔ کل صبح ملزمان کو شناخت پریڈ کیلئے عدالت میں پیش کیا جائے گا۔ اس سے قبل پولیس نے لیگی ایم پی اے پر فائرنگ کے کیس میں متعدد لوگوں کو شامل تفتیش کیا تھا۔ واقعہ کے مرکزی دونوں سہولت کار ساجد اور فخر عالم اسلحہ ڈیلر کو بھی پولیس نے گرفتار کر لیا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ آئی جی پنجاب کی ہدایت پر اس کیس میں ملوث دیگر افراد سے پوچھ گچھ کا سلسلہ جاری ہے۔ بلال یاسین پر موہنی روڈ لاہور پر دو موٹر سائیکل سوار شوٹرز نے 30 دسمبر کی رات کو فائرنگ کی تھی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں