نریندر مودی پرچی پڑھنے والے وزیراعظم نکلے

نئی دہلی: (ویب ڈیسک) دنیا کے سامنے بڑی بڑی باتیں کرنے والے انڈین وزیراعظم نریندر مودی پرچی دیکھ کر پڑھنے والے وزیراعظم نکلے۔ براہ راست شو کے دوران سامنے لگے پرامٹر پرکچھ لکھا نظر نہ آیا تو موصوف کی شکل دیکھنے والی تھی۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق انڈین وزیراعظم نریندر مودی کا عالمی اکنامک فورم سے آن لائن خطاب جاری تھا کہ اچانک ان کے سامنے نصب ٹیلی پرامٹر بند ہو گیا۔ یہ صورتحال دیکھتے ہوئے مودی جی کی ہوائیاں اور ہاتھوں کے طوطے اڑ گئے۔

اس عجیب کشمکش میں نریندر مودی کا اپنے منہ سے ایک لفظ تک نکالنا مشکل ہو گیا۔ بوکھلاہٹ میں انہوں نے کانوں پر ہیڈ فون لگایا اور پوچھنے لگے کہ کیا میری آواز سنائی دے رہی ہے لیکن یہ آواز بھی ان کے حلق میں کہیں پھنسی رہ گئی۔

انڈیا کی اپوزیشن جماعت کانگریس کے لیڈر راہول گاندھی نے نریندر مودی کی اس حالت کا خوب مذاق اڑایا۔ سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹویٹر پر اپنی طنزیہ جملے بازی میں ان کا کہنا تھا کہ ٹیلی پرامٹر بھی مودی کے جھوٹ کو برداشت نہیں کر سکا۔ خیال رہے کہ راہول گاندھی اس سے پہلے بھی کئی بار انڈین وزیراعظم کو ”ٹیلی پرامٹر” وزیراعظم کا خطاب دے چکے ہیں۔

نریندر مودی کی اس جگ ہنسائی پر سوشل میڈیا بھی پیچھے نہیں رہا اور ” ٹیلی پرامٹر پی ایم” کا ٹاپ ٹرینڈ بن گیا۔ پراکاش نامی ایک صارف نے انڈین وزیراعظم کو ”حقیقی پپو” کا خطاب دے دیا۔

ایک صارف نے لکھا کہ کہا ہنسی مذاق اپنی جگہ لیکن انڈیا کے سب سے اعلیٰ عہدے پر فائز شخص پرامٹر کے بغیر ایک لفظ بھی نہیں پڑھ سکتا، یہ پورے ملک کے لئے انتہائی شرمندگی کا باعث ہے۔

پنکج نامی سوشل میڈیا صارف بھی اس موقع پر پیچھے نہیں رہے اور دور کی کوڑی لائے کہ آج یہ بات ثابت ہو چکی ہے کہ نریندر مودی سب سے بڑے لیڈر نہیں بلکہ سب سے بڑے اداکار ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں