اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے بینکوں کو خبردار کر دیا

اسلام آباد (پبلک نیوز) اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے بینکوں کو ٹرانزیکشن الرٹس میں تاخیر پر سخت ایکشن لینے کا عندیہ دے دیا۔ کمرشل بینکوں کو اکاونٹس ہولڈز کو ٹرانزیکشن الرٹس بھجنے پر تاخیر کرنے پر سخت کارروائی سے خبردار کردیا ڈیجیٹل ادائیگیوں کی سیکیورٹی سے متعلق ایک سرکلر جاری کردیا۔

اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے بینکوں کو ٹرانزیکشن الرٹس میں تاخیر پر سسخت ایکشن لینے کا عندیہ دے دیا۔ ڈیجیٹل ادائیگیوں کی سیکیورٹی سے متعلق ایک سرکلر جاری کردیا۔ 28 نومبر 2018 کو بینکوں کو رہنما خطوط جاری کیے تھے۔

اسٹیٹ بینک کے مطابق بینکوں اور مائیکرو فنانس بینکوں کو ہدایت کی تھی کہ ای میل اور مفت ایس ایم ایس کے زریعے ٹرانزیکشن الرٹ بھیجیں۔ اسٹیٹ بینک کو شکایات ملیں کہ ان ہدایات پر عمل نہیں کیا جارہا۔ صارفین کو اپنے اکاؤنٹس میں ٹرانزیکشنز پوسٹ کرنے کے باوجود فوری طور پر ایس ایم ایس الرٹس موصول نہیں ہوتے ہیں۔

کئی بار صارفین کو ایس ایم ایس کے زریعے اپنے معلومات بھی نہیں ملتی۔ اسٹیٹ بینک کی بینکوں کو ایس ایم ایس کے زریعے تمام الرٹس ہر صورت بھجنے کے اقدامات کرنے کی ہدایت کی گئی ہے۔ بینک صارفین کو ام میل اور ایس ایم ایس الرٹ کے زریعے کریڈٹ، ڈیبٹ کی اپ دیٹ ببھجنے کی ہدایت بھی کردی گئی۔

ہدایات کا اطلاق فوری طور پر کیا جائے۔ تمام ہدایات کی تعمیل میں ناکامی پر متعلقہ قانونی اور ریگولیٹری دفعات کے مطابق اسٹیٹ بینک کی جانب سے تعزیری کارروائی کی جائے گی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں