سمارٹ فون چارج کرتے وقت یہ 5 غلطیاں نہ کریں

لاہور: (ویب ڈیسک) سمارٹ فون کو چارج کرتے وقت یہ 5 غلطیاں نہ کریں، ورنہ فون کو بہت بڑا نقصان ہو سکتا ہے۔

سمارٹ فونز ہماری زندگی کا ایک اہم حصہ بن چکے ہیں۔ دن بھر موبائل استعمال کرنے کے بعد اس کی بیٹری ختم ہو جاتی ہے اور آپ موبائل کو دوبارہ چارج کرتے ہیں۔ لیکن کچھ لوگ موبائل چارج کرتے وقت ایسی غلطیاں کرتے ہیں جس کا خمیازہ انہیں بھگتنا پڑ سکتا ہے۔

غلط طریقے سے موبائل چارج کرنے سے بیٹری خراب ہونے کا امکان بڑھ جاتا ہے۔ ہم آپ کو ان غلطیوں کے بارے میں معلومات دے رہے ہیں، جو آپ اکثر موبائل چارج کرتے وقت کرتے ہیں اور آپ کو اس کا علم تک نہیں ہوتا۔

اگر آپ فون کی بیٹری کو خراب ہونے سے بچانا اور زیادہ دیر تک چلانا چاہتے ہیں تو اپنے سمارٹ فون کو ہمیشہ اصل چارجر سے چارج کریں۔ اگر آپ کسی دوسرے یا مقامی چارجر سے فون چارج کرتے ہیں تو اس سے آپ کے فون کی بیٹری بری طرح متاثر ہوتی ہے۔ مسلسل ایسا کرنے سے آپ کے فون کی بیٹری خراب ہو سکتی ہے۔ اس لیے فون کے ساتھ آنے والا چارجر ہی استعمال کریں۔

بہت سے لوگ کسی بھی وقت موبائل کو چارج پر لگا دیتے ہیں۔ یعنی بیٹری 90 فیصد چارج ہونے کے باوجود بھی موبائل چارج ہوتا ہے۔ سمارٹ فون ماہرین کا خیال ہے کہ فون کو بار بار چارج کرنے سے بیٹری پر دباؤ پڑتا ہے۔

خیال رہے کہ جب فون کی بیٹری 20 فیصد یا اس سے کم ہو تب ہی موبائل کو چارج پر رکھیں۔ ایسا کرنے سے بیٹری پر کوئی دباؤ نہیں پڑے گا اور بیٹری جلد خراب نہیں ہوگی۔

کئی بار لوگ کور کے ساتھ فون کو چارجنگ پر لگا دیتے ہیں، جبکہ ایسا نہیں کرنا چاہیے۔ کہا جاتا ہے کہ موبائل کور کے ساتھ فون کو چارجنگ پر رکھنے سے فون کی بیٹری پر دباؤ پڑتا ہے اور اس کے خراب ہونے کے امکانات بڑھ جاتے ہیں۔ اس لیے جب بھی آپ فون کو چارج پر رکھیں، کور کو ہٹا دیں۔

کئی بار، فون کو تیزی سے چارج کرنے کے لیے، ہم فاسٹ چارجنگ ایپ ڈاؤن لوڈ کرتے ہیں۔ دراصل، ایپ فون کے پس منظر میں مسلسل چلتی رہتی ہے اور آپ کی زیادہ بیٹری استعمال کرتی ہے۔ اس سے آپ کے فون کی بیٹری تیزی سے ختم ہو جاتی ہے۔ اس لیے آپ کو ان تھرڈ پارٹی ایپس کو استعمال نہیں کرنا چاہیے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں