شہید کانسٹیبل کمال احمد کے بچوں کی تفصیلات سامنے آ‌گئیں

لاہور کے علاقے ماڈل ٹاؤن میں پی ٹی آئی کارکنوں کے خلاف پولیس چھاپے کے دوران کانسٹیبل کمال احمد گولی لگنے سے شہید ہو گیاہے ، اس موقع پر پنجاب پولیس کی جانب سے اہلکار کے بچوں کیلئے خصوصی پیغام جاری کر دیا گیاہے ۔

تفصیلات کے مطابق پنجاب پولیس نے آفیشل ٹویٹر اکاﺅنٹ پر شہید کانسٹیبل کمال کی فیملی کی تصویر جاری کرتے ہوئے کہا کہ ” شہید کانسٹیبل کمال احمد کے 5 کم سن بچے ہیں۔ جن میں بڑی بیٹی کی عمر 11 سال جبکہ چھوٹا بیٹا صرف 8 ماہ کا ہے۔ پنجاب پولیس مشکل کی اس گھڑی میں اپنے شہداءکی فیملیز کے ساتھ ہیں اور انہیں تنہا نہیں چھوڑیں گے۔“

سی سی پی او لاہور کی جانب سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا کہ ” سی سی پی او بلال صدیق کمیانہ کا کانسٹیبل کمال احمد کی شہادت پر اہل خانہ سے اظہار تعزیت کرتے ہوئے کہا کہ فرض کی راہ پر قربان ہونے والے جوانوں کو سلام پیش کرتے ہیں،کانسٹیبل کمال احمد کو شہید کرنے والے مبینہ ملزمان کو لاہور پولیس نے گرفتار کر لیا، مقدمہ درج، مزید تفتیش جاری ہے۔“

واضح رہے کہ ماڈل ٹاؤن میں چھاپے کے دوران ایک گھر کی چھت سے فائرنگ کے نتیجے میں کانسٹیبل جاں بحق ہو گیا تھا ۔علاوہ ازیں ماڈل ٹاؤن میں پولیس کے چھاپے کے دوران مکان کی چھت سے فائرنگ اور اس کے نتیجے میں پولیس اہلکار کی شہادت کا مقدمہ درج کرلیا گیا ہے۔

ایف آئی آر کے مطابق پولیس نے کرائے داری ایکٹ کے معاملے پر چھاپا مارا، چھاپے کے دوران ساجد نامی شخص کے گھرکی چھت سے کسی نے فائر کیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں