مشہور انڈین گلوکار کا لائیو کنسرٹ کے دوران انتقال

انڈیا کے مشہور گلوکار ایڈاوا بشیر کا لائیو پرفارمنس کے دوران انتقال ہو گیا۔ ایڈاوا بشیر نے اپنے پسماندگان میں دو بیوائیں ریحانہ، رشیدہ اور 5 بچے چھوڑے ہیں۔

ایڈاوا بشیر کا تعلق انڈیا کی ریاست کیرالہ سے تھا۔ ان کا شمار لیجنڈ گلوکاروں میں ہوتا تھا۔ انہوں نے مقامی زبان میں سیکنڑوں گانے گائے جبکہ فلموں میں بھی اپنی آواز کا جادو جگایا۔ انڈیا کی شوبز اور سیاسی وسماجی شخصیات نے ایڈاوا بشیر کے اچانک انتقال پر ان کے اہلخانہ سے دلی دکھ اور ہمدردی کا اظہار کیا ہے۔

مرحوم مسلمان تھے اور ان کی عمر 78 برس تھی۔ انہوں نے ریاست کیرالہ کی مشہور میوزک اکیڈمی سے موسیقی میں تعلیم حاصل کی تھی۔ ایڈاوا بشیر نے کئی ملیالم اور ہندی فلموں میں بھی اپنی آواز کا جادو جگایا۔

ایڈاوا بشیر کو سب سے زیادہ شہرت ان کے میوزک بینڈ کی وجہ سے ملی۔ وہ کئی سالوں تک آل کیرالہ میوزیشین اینڈ ٹیکنیشیئن ایسوسی ایشن کے سربراہ بھی رہے۔

انڈین میڈیا کی رپورٹس کے مطابق الاپپوزا شہر میں ایک لائیو کنسرٹ کا اہتمام کیا گیا جس میں ایڈاوا بشیر کو بطور مہمنا خصوصی مدعو کیا گیا تھا۔

لائیو کنسرٹ کے دوران ایڈاوا بشیر اپنی آواز کا جادو جگا رہے تھے۔ انہوں نے مشہور ہندی گانا ’مانا ہو تم بے حد حسین ’ جیسے ہی گنگنانا شروع کیا تو ان کے سینے میں اچانک درد ہونا شروع ہو گیا اور وہیں گر کر دم توڑ گئے۔

تاہم وہاں موجود افراد نے ایڈاوا بشیر کو فوری طور پر طبی امداد کیلئے ہسپتال منتقل کیا جہاں ڈاکٹروں نے بتایا کہ ان کی موت واقع ہو چکی ہے۔ اس موقع کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہو چکی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں