بجلی سبسڈی کو چیلنج کرنے کا اقدام قابل مذمت ہے: عطاء اللہ تارڑ

صوبائی وزیر داخلہ عطاء اللہ تارڑ نے تحریک انصاف کی جانب سے بجلی سبسڈی کو سپریم کورٹ اور الیکشن کمیشن میں چیلنج کئے جانے پر سخت ردعمل دیتے ہوئے اسے قابل مذمت قرار دیدیا ہے۔

عطاء اللہ تارڑ نے بیان میں کہا کہ پی ٹی آئی نے پنجاب حکومت کی جانب سے 100 یونٹ مفت بجلی دینے کے اقدام کو سپریم کورٹ اور الیکشن کمیشن میں چیلنج کرکے انتہائی قابل مذمت قدم اٹھایا ہے۔

صوبائی وزیر داخلہ نے کہا کہ ان لوگوں نے پاکستان کی معیشت تباہ کی اور لوٹ مار کا بازار گرم کیا جبکہ حکومت نے یہ اقدام غریب عوام کو ریلیف دینے کے لئے کیا ہے۔ ایک کسان، فیکٹری ورکر، مزدور اور دیہاڑی دار کے لئے یہ ریلیف پیکج انتہائی ضروری تھا۔ غربت عوام کے لئے مہینے کی کمائی سے بجلی کا بل ادا کرنا بہت مشکل ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ عام آدمی کو ریلیف دینا تحریک انصاف کو پسند نہیں آیا۔ ان کو تکلیف ہوئی کہ عام آدمی اس ریلیف پیکج سے مستفید ہوگا۔ انہوں نے تو چار سال میں عوام کو صرف دکھ ہی پہنچائے۔ یہ غریب اور عوام دشمن لوگ ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ تحریک انصاف نے اس کام کو چیلنج کرکے مکروہ حرکت کی۔ انہوں نے ریلیف اقدام کو چیلنج کرکے غریب اور عوام دشمن ہونے کا ثبوت دیا ہے۔

صوبائی وزیر داخلہ نے بتایا کہ ریلیف پیکج بجٹ کا حصہ ہے جسے اسمبلی سے منظور کروایا گیا ہے۔ اس پیکج کا اطلاق صرف 20 حلقوں میں نہیں بلکہ پورے پنجاب کے لئے ہے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں