لکی مروت:پولیس موبائل پردہشت گروں کاحملہ،6اہلکارشہید

لکی مروت میں پولیس موبائل پر دہشتگردوں کے حملے سے 6 پولیس اہلکار شہید ہوگئے۔

پولیس حکام کا کہنا ہےکہ لکی مروت میں ہفتہ وار میلے میں پولیس موبائل سکیورٹی کی غرض سے جارہی تھی کہ اسی دوران موٹرسائیکل پر سوار دہشتگردوں نے تھانہ ڈاڈیوالہ کی حدود میں موبائل پر اندھا دھند فائرنگ کردی جس سے 6 پولیس اہلکار شہید ہوگئے۔پولیس کے مطابق دہشتگردوں کے حملے میں شہید ہونے والوں میں ڈیوٹی انچارج اے ایس آئی اور موبائل کا ڈرائیور بھی شامل ہیں جبکہ شہید ہونے والوں کی شناخت کانسٹیبل پرویز، اسسٹنٹ سب انسپکٹر علم دین، عبداللہ ، احمد، دل جان اور محمود کے ناموں سے ہوئی ہے۔

ڈی پی او کا کہنا ہے کہ واقعے کے بعد علاقے کی ناکہ بندی کردی گئی ہے اور دہشتگردوں کی گرفتاری کیلئے سرچ آپریشن بھی کیا جارہا ہے۔دوسری جانب وزیر داخلہ رانا ثنااللہ کی جانب سے لکی مروت حملے کی مذمت کی گئی ہے اور چیف سیکرٹری اور آئی جی کے پی سے رپورٹ طلب کرلی گئی ہے۔

علاوہ ازین وزیراعظم شہباز شریف نے دہشتگرد حملے کی مذمت کرتے ہوئے شہدا کو خراج عقیدت پیش کیا ہے۔

وزیراعظم کا کہنا ہے کہ مادر وطن پر جان قربان کرنے والے بیٹوں کو قوم سلام پیش کرتی ہے ، دہشتگرد پاکستان کے دشمن ہیں اور پورا ملک ان کےخلاف سیسہ پلائی دیوارثابت ہوگا، پولیس نے دہشتگردی کے خلاف ہراول دستے کا قابل فخر کردار ادا کیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں