وہ ملک جہاں دلہنوں کی ’منڈی‘ لگتی ہے!

وہ ملک جہاں دلہنوں کی ’منڈی‘ لگتی ہے!

ویب‌ڈیسک: کیا آپ جانتے ہیں کہ دنیا میں ایک ایسا ملک بھی ہے جہاں شادی کے لیے لڑکیاں بازار میں فروخت ہوتی ہیں؟ آپ حیران ہیں نا؟ آج ہم آپ کو اس ملک کے بارے میں بتانے جا رہے ہیں جہاں لڑکیوں کی بازار میں شادی کے لیے بولی لگا ئی جاتی ہے. یہی نہیں اس لڑکی کے والدین اسے بازار لے جاتے ہیں۔

اہم بات یہ ہے کہ اس بازار میں دلہن کے بہت سے خریدار ہوتے ہیں، جو اس کو خریدنے کے لیے بولی لگاتے ہیں۔ جو سب سے زیادہ بولی لگاتا ہے، ماں باپ اپنی بیٹی کا رشتہ اسے دے دیتے ہیں.

بلغاریہ کے شہر Stara Zagora کے نام سے ایک جگہ ہے جہاں سال میں چار بار دلہنوں کا بازار سجایا جاتا ہے۔ یہاں آنے والا دولہا اپنی پسند کی دلہن خرید سکتا ہے اور اسے اپنی بیوی بنا سکتا ہے۔ ایک رپورٹ کے مطابق اس بازار میں لائی جانے والی لڑکیاں زیادہ تر نابالغ ہوتی ہیں۔ ان لڑکیوں کی عمریں صرف 13 سے 17 سال کے درمیان ہوتی ہے.

دلہنوں کا بازار کلید زھی برادری لگاتی ہے اور اسی معاشرے سے تعلق رکھنے والے افراد دلہنیں خریدتے ہیں۔ کوئی باہر کا آدمی یہاں دلہن خریدنے نہیں آ سکتا۔ ایک رپورٹ کے مطابق اس کمیونٹی میں تقریباً 18000 لوگ ہیں۔ کہا جاتا ہے کہ اس کمیونٹی کی لڑکیوں کو بھی اس روایت پر کوئی خاص اعتراض نہیں ہے، کیونکہ وہ شروع سے ہی اس کے لیے ذہنی طور پر تیار ہوتی ہیں۔

معلومات کے مطابق اس برادری کے لوگ اپنی بیٹیوں کی تعلیم جلد چھڑا دیتے ہیں۔ کہا جاتا ہے کہ جو لڑکی دلہن کے بازار میں آئے اسے گھر کے کام کرنے چاہئیں اور اس کی عمر کم عمر ہونی چاہیے۔ جب لڑکا لڑکی کو پسند کرتا ہے تو سودے کی رقم طے کی جاتی ہے۔ ایک رپورٹ کے مطابق اس بازار میں لڑکیوں کی ڈیل 300 سے 400 ڈالر تک ہوتی ہے۔

دلہنوں کے بازار تک پہنچنے کے لیے یہ لڑکیاں کئی دن پہلے سے تیاریاں شروع کر دیتی ہیں۔ زیادہ پیسے حاصل کرنے کے لیے خوبصورت نظر آنا بہت ضروری ہے۔ اس کے لیے وہ اچھے کپڑے اور میک اپ کے ساتھ مارکیٹ میں آتی ہیں۔ بازار میں لڑکی کو پسند کرنے کے بعد لڑکا اسے اپنی بیوی مان لیتا ہے۔ اس کے بعد والدین کو اس شادی کے لیے راضی کرنا ہوتا ہے. لڑکے اور لڑکی کے درمیان خاندان اور آمدنی پر بحث ہوتی ہے، پھر خاندان شادی کی رقم طے کرتا ہے اور رشتہ طے پاتا ہے۔

ایڈیٹر

احمد علی کیف نے یونیورسٹی آف لاہور سے ایم فل کی ڈگری حاصل کر رکھی ہے۔ پبلک نیوز کا حصہ بننے سے قبل 24 نیوز اور سٹی 42 کا بطور ویب کانٹینٹ ٹیم لیڈ حصہ رہ چکے ہیں۔