ہم آئی ایم ایف کے معاملات میں جکڑے ہوئے ہیں ، شہبازشریف

ہم آئی ایم ایف کے معاملات میں جکڑے ہوئے ہیں ، شہبازشریف
لاہور : وزیراعظم شہبازشریف کا کہنا ہے کہ ہم آئی ایم ایف کے معاملات میں جکڑے ہوئے ہیں ۔ لاہور میں پاکستان ایڈمنسٹریٹو سروسز پروبیشنری آفیسرز کی پاسنگ آؤٹ تقریب سے خطاب کے دوران وزیراعظم شہبازشریف نے کہا کہ آج میرے لیے انتہائی خوشی کا موقع ہے پاکستان بھر کے چمکتے ستاروں کو اسناد تقسیم کرنا میرے لیے فخر کی بات ہے ، انہوں نے پاس آؤٹ ہونے والے افسران کے والدین کو بھی مبارک باد پیش کی ۔ شہبازشریف کا کہنا تھا کہ ایسے افسران کو جانتا ہوں کہ جنہوں نے لگن سے عوام کی خدمت کی ہے، گذشتہ حکومت نے بعض افسران پر بے بنیاد الزامات لگائے ہیں ، ان کے خاندان کو شرمندہ کیا گیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان اس وقت مشکل حالات سے گزررہا ہے، عملی میدان میں بہت سے چیلنجز آئیں گے، ان سے نمٹنے کا ہنر ہونا چاہیے۔ وزیراعظم کا کہنا تھا کہ گذشتہ مون سون سیزن کے دوران سیلاب کی وجہ سے کئی علاقے تباہ ہوگئے تھے ، بلوچستان کے کچھ علاقوں میں اب بھی سیلابی پانی موجود ہے ، صحبت پور میں اسکول کی تعمیر کا ٹارگٹ دیا ہے ، بلوچستان کا علاقہ صحبت پور سیلاب میں سمندر نظر آتا تھا، افسران نے سیلاب زدگان کی جو مدد کی جو کہ قابل تعریف ہے ، دکھی انسانیت کی مدد کرنے والوں کو یاد رکھا جائے گا۔ ان کا کہنا تھا کہ یواے ای سے مزید قرضہ نہیں لینا چاہتے لیکن مجبوری ہے،پہلے فیصلہ کیا تھا کہ قرضہ نہیں مانگوں گا، یو اے ای کے صدر سے کہا مہربانی کریں 2ارب ڈالر کا قرضہ رول اوور کریں ۔ وزیراعظم نے کہا کہ آرمی چیف کوسعودی عرب حکومت نے عزت دی اور بڑی امداد دی، سعودی عرب نے 3 ارب ڈپازٹ کو بڑھاکر 5 ارب کرنے اور سرمایہ کاری کی مد میں بھی پاکستان کی مالی مدد کااعلان کیا ، لیکن ہے تو یہ قرض ہی، ملک اگرصحیح سمت میں ہوتاتوہمیں قرضوں کی ضرورت نہ پڑتی ۔ انہوں نے مزید کہا کہ آج ہمیں پہلے سے زیادہ متحد ہونے کی ضرورت ہے، مشکلات سے ضرور نکلیں گے، قائد کے پاکستان کو مضبوط بنائیں گے۔
ایڈیٹر

احمد علی کیف نے یونیورسٹی آف لاہور سے ایم فل کی ڈگری حاصل کر رکھی ہے۔ پبلک نیوز کا حصہ بننے سے قبل 24 نیوز اور سٹی 42 کا بطور ویب کانٹینٹ ٹیم لیڈ حصہ رہ چکے ہیں۔