گوگل پلے اسٹور  سے  مشکوک ایپلی کیشنز انسٹال کرنیوالے ہوجائیں ہوشیار، ایڈوائزری جاری

گوگل پلے اسٹور  سے  مشکوک ایپلی کیشنز انسٹال کرنیوالے ہوجائیں ہوشیار، ایڈوائزری جاری

(ویب ڈیسک ) مشکوک ایپلی کیشنز ڈاؤنلوڈ کرنے سے سرکاری حساس ڈیٹا چوری ہونے کا امکان ہے۔

مشکوک اپلیکیشنز کے ذریعے حساس سرکاری ڈیٹا چرانے کی کوششیں، کابنیہ ڈویژن نے سرکاری افسران کیلئے سائبر ایڈوائزی جاری کر دی ۔

گوگل پلے اسٹور پر مشکوک اور غیر محفوظ اینڈرائیڈ ایپلی کیشنز موجود ہونے کا انکشاف ہوا ہے۔ مشکوک ایپلی کیشنز ڈاؤنلوڈ کرنے سے سرکاری حساس ڈیٹا چوری ہونے کا امکان ہے۔

جاری مراسلے میں کہا گیا ہے کہ  ایپس ڈویلپر کو صارف کی کنٹیکٹ لسٹ، میڈیا، میسجز تک بلا اجازت رسائی فراہم کرتی ہیں، اینڈرائڈ موبائیلز پر تھرڈ پارٹی اور نا معلوم سورس والی ایپس انسٹال نہ کی جائیں۔

مراسلے  میں کہا گیا ہے کہ  صارف ایپس انسٹال کرنے سے پہلے دیگر صارفین کے ریویوز کا جائزہ لے، صارف اپنا ذاتی ڈیٹا پر گر ایپ کو فراہم نہ کرے،  ایپس کو اپنے ڈیٹا تک رسائی فراہم نہ کریں، مشکوک سرگرمی کہ صورت میں فوری موبائل تبدیل کریں۔

مراسلے  میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ  ایپس انسٹال کرنے سے قبل صارف پرائویسی پالیسی کو ضرور پڑھیں،  نا معلوم یا مشکوک سورس سے اپنا ای میل اکاؤنٹ پر گز نہ کھولیں۔

مراسلے میں تنبیہہ کی گئی ہے کہ  آفیشل ڈیٹا سمارٹ فون میں ہر گز نہ رکھیں،  اپنی لوکیشن کو بند رکھیں، حساس مقامات پر موبائل فون لے کر نہ جائیں،  موبائل فونز میں اچھے اینٹی وائرس سافٹ وئیرز انسٹال کریں۔

Watch Live Public News