نان فائلرز کے بینکوں  سے کیش نکلوانے پر بھاری ٹیکس لگے گا، ذرائع

نان فائلرز کے بینکوں  سے کیش نکلوانے پر بھاری ٹیکس لگے گا، ذرائع

(ویب ڈیسک ) ذرائع کے مطابق  آئندہ بجٹ  میں   نان فائلرز کے بینکوں سے کیش نکلوانے پر مزید ٹیکس لگانے کی تجویز  ہے، نان فائلرز کے بینکوں سے 50 ہزار روپے زائد رقم نکالنے پر 0.6 فیصد ایڈوانس ٹیکس عائد ہے  جبکہ آئندہ بجٹ میں   نان فائلرز پر کیش نکالنے پر ٹیکس کی شرح 0.9 فیصد کرنے کی تجویز  ہے۔

عوام کو کیلئے خوشخبری ، پٹرول کی قیمت میں بڑی کمی

ذرائع کا کہنا ہے کہ  آئندہ بجٹ میں تاجردوست ایپ میں شامل نہ ہونے والوں کے خلاف کارروائیوں کا امکان ہے۔ تاجر دوست ایپ  میں شامل نہ ہونے والوں کو نوٹس بھیجے جائیں گے،   تاجر دوست ایپ  نہ لینے والوں کو جرمانے عائد کیے جاسکتے ہیں۔

 ذرائع کے مطاق  غیر رجسٹرڈ کاروبار کے خلاف انکم ٹیکس آرڈیننس سیکشن  182 کے تحت کارروائی ہوسکتی ہے،تاجر دوست  ایپ نہ لینے والے غیررجسٹرڈ  کاروبار پر  10 ہزار روپے جرمانہ  عائد ہوسکتا ہے۔

ذرائع نے بتایا ہے کہ آئندہ   بجٹ  میں   نان فائلرز کے بینکوں سے کیش نکلوانے پر مزید ٹیکس لگانے کی تجویز  ہے،   نان فائلرز کے بینکوں سے 50 ہزار روپے زائد رقم نکالنے پر 0.6 فیصد ایڈوانس ٹیکس عائد ہے جبکہ آئندہ بجٹ میں   نان فائلرز پر کیش نکالنے پر ٹیکس کی شرح 0.9 فیصد کرنے کی تجویز  ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ  آئندہ   بجٹ میں نان فائلرز  کے  کیش نکالنے پر ایڈوانس ٹیکس کی مد میں مزید   15 ارب روپے سے زائد جمع کرنے کا تخمینہ ہے۔غیر ضروری اور لگژری اشیا کی امپورٹ پر ٹیکس بڑھانے کی تجویز ہے۔

ذرائع کے مطابق آیندہ بجٹ میں 1300 سی سی سے زائد کی امپورٹ گاڑیوں پر ٹیکس بڑھنےکا امکان ہے،   850سی سی سے  زائد کی تمام نئی گاڑیوں پر ودہولڈنگ ٹیکس بڑھانے کرنے کی تجویز بھی دی گئی ہے۔اس کے علاوہ آئندہ بجٹ میں  غیر ضروری اور لگژری آئٹمز پر ڈیوٹی بڑھائے جانے کا امکان ہے جبکہ  چھٹے شیڈول میں موجود ٹیکس رعایتیں کم کرنےپر بھی غور کیا جا رہا ہے۔