مہنگائی کیخلاف بڑا اقدام، اعدادوشمار کا ڈیجیٹل سسٹم لانچ

مہنگائی کیخلاف بڑا اقدام، اعدادوشمار کا ڈیجیٹل سسٹم لانچ
اسلام آباد (پبلک نیوز) تبدیلی سرکار کا مہنگائی کے خلاف بڑا اقدام، وزیر اعظم کی ہدایات ہر پاکستان شماریات بیورو نے نیا مہنگائی اعدادوشمار کا نیا ڈیجیٹل سسٹم لانچ کر دیا ہے۔ پاکستان شماریات بیورو کے مطابق ڈیسیزن سپورٹ سسٹم فار انفلیشن بروقت فیصلوں میں معاون ثابت ہو گا۔ نئے سسٹم میں بڑے شہروں میں ڈی سی ریٹ اور مارکیٹ ریٹ میں فرق دیکھایا گیا ہے۔ پالیسی سازی اور صوبائی اور ضلعی انتظامیہ جلد کاروائی کر سکیں گی۔مہنگائی جانچنے کیلئے 17 شہروں میں 10 سے 12 اشیاء ضروریہ کا جائزہ لیا جائے گا۔ گزشتہ ہفتے اشیاء ضروریہ کی قیمتوں میں 0.82 فیصد اضافہ ہوا۔ گزشتہ ہفتے سکھر میں سب سے زیادہ مہنگائی میں اضافہ ہوا۔ سکھر میں 2.3 فیصد اور سلام آباد میں 1.09 فیصد مہنگائی بڑھ گئی۔گزشتہ ہفتے ٹماٹر کی قیمت میں 14.3 فیصد اضافہ، چکن 11.5 فیصد مہنگا ہو گیا۔ پیاز 8.3 فیصد، آلو 3.1 فیصد، لہسن 2.5 فیصد گھی اور کوکنگ آئل 1.5 فیصد مہنگے ہو گئے۔ گزشتہ ہفتے دال مونگ 3.7 فیصد اور کیلا 2.8 فیصد سستا ہو گیا۔ڈیجیٹل سسٹم نے ڈی سی ریٹ اور مارکیٹ ریٹ میں 9 سے 18 فیصد تک کے فرق کی نشاندہی کر دی۔ ضلعی انتظامیہ اپنے علاقوں میں ہی سرکاری ریٹ کا نفاذ کرنے میں ناکامیاب رہی۔ بڑے گوشت کا ڈی سی ریٹ 443 روپے مارکیٹ ریٹ 540 روپے فی کلو تھا۔ ضلعی انتظامیہ قصابوں کی طرف سے عوام سے 17.9 فیصد اضافی وصولی پر خاموش رہی۔گھی کا مارکیٹ ریٹ ڈی سی ریٹ سے 16 فیصد زائد، گھی کا ڈی سی ریٹ 260 روپے جبکہ مارکیٹ ریٹ 310 روپے فی کلو، آٹا کا مارکیٹ ریٹ سرکاری ریٹ سے 15 فیصد زائد، آٹے کا ڈی سی ریٹ 969 روپے مارکیٹ ریٹ 1139 روپے فی بیگ، پیاز ڈی سی ریٹ 30 روپے مارکیٹ ریٹ 15.5 فیصد اضافے کے ساتھ 35 روپے فی کلو، دودھ ڈی سی ریٹ 96 روپے مارکیٹ ریٹ 13.6 فیصد اضافے کے ساتھ 111 روپے فی کلو، ڈی سی ریٹ ٹوٹا چاول 85 جبکہ مارکیٹ ریٹ 9.7 فیصد اضافے کے ساتھ 94 روپے فی کلو، چینی ڈی سی ریٹ 89 روپے مارکیٹ ریٹ 9.7 فیصد اضافے کے ساتھ 98 روپے فی کلو، ٹماٹر ڈی سی ریٹ 38 مارکیٹ ریٹ 9.6 فیصد مہنگا 43 روپے فی کلو، آلو ڈی سی ریٹ 46 روپے مارکیٹ ریٹ 9.1 فیصد مہنگا 51 روپے فی کلو، چکن ڈی سی ریٹ 218 روپے مارکیٹ ریٹ 15.5 فیصد مہنگا 231 روپے فی کلو رہا۔
ایڈیٹر

احمد علی کیف نے یونیورسٹی آف لاہور سے ایم فل کی ڈگری حاصل کر رکھی ہے۔ پبلک نیوز کا حصہ بننے سے قبل 24 نیوز اور سٹی 42 کا بطور ویب کانٹینٹ ٹیم لیڈ حصہ رہ چکے ہیں۔