روس کیساتھ جنگ؛ یوکرینی ماڈل نے ہتھیار اٹھا لیے

روس کیساتھ جنگ؛ یوکرینی ماڈل نے ہتھیار اٹھا لیے
روس- یوکرین جنگ کے درمیان، بہت سے یوکرائنی شہریوں نے ملک کے دفاع کے لیے ہتھیار اٹھا لیے ہیں۔ مردوں کے ساتھ ساتھ کئی خواتین اور مشہور شخصیات بھی جنگ میں اپنا حصہ ڈال رہی ہیں۔ اس دوران یوکرین کی خوبصورت ترین خاتون اور سابق مس یوکرین نے بھی بندوق اٹھا لی۔ ماضی میں‌ مس یوکرین کا ٹائٹل جیتنے والی ایناستاسیا لینا کی تصاویر منظر عام پر آگئیں۔ سوشل میڈیا پر تصاویر شیئر کریں۔ اناستاسیا لینا نامی خاتون نے روسی حملے کے خلاف اپنے ملک کے دفاع کے لیے یوکرین کی فوج میں شمولیت اختیار کر لی ہے۔ Anastasia Lena 2015 کے مس گرینڈ انٹرنیشنل بیوٹی مقابلہ میں یوکرین کی نمائندہ تھیں۔ لینا نے اپنے انسٹاگرام اکاؤنٹ پر بتایا کہ انہوں نے اپنے 'گھر' کی حفاظت کے لیے ہتھیار اٹھا لیے ہیں۔ 'نیٹو یوکرین پر درخواست دے' سوشل میڈیا پر تصاویر شیئر کرتے ہوئے انہوں نے لکھا کہ 'جو بھی یوکرین کی سرحد میں قبضے کی نیت سے داخل ہوگا اسے مار دیا جائے گا۔ اناستاسیا نے ایک اور پوسٹ میں طنزیہ انداز میں کہا کہ 'ہماری یوکرینی فوج جس طرح لڑ رہی ہے، نیٹو کو یوکرین میں شمولیت کے لیے درخواست دینی چاہیے۔ صدر زیلنسکی کو ایک سچا اور مضبوط لیڈر بتایا اناستاسیا نے یوکرین کے صدر ولادیمیر زیلنسکی کی فوجیوں کے ساتھ چہل قدمی کی ایک تصویر بھی شیئر کی اور انہیں ایک "سچا اور مضبوط رہنما" قرار دیا۔ دوسری جانب یوکرین کی رکن پارلیمنٹ کیرا روڈک نے بھی جنگی ہتھیار تھامے تصویر شیئر کر دی اور ساتھ ہی لکھا کہ میں کلاشنکوف چلانا اور ہتھیار اٹھانے مشق کر رہی ہوں۔
ایڈیٹر

احمد علی کیف نے یونیورسٹی آف لاہور سے ایم فل کی ڈگری حاصل کر رکھی ہے۔ پبلک نیوز کا حصہ بننے سے قبل 24 نیوز اور سٹی 42 کا بطور ویب کانٹینٹ ٹیم لیڈ حصہ رہ چکے ہیں۔