ن لیگ اور پیپلزپارٹی میں برف پگھل گئی، معاملات طے پاگئے

ن لیگ اور پیپلزپارٹی میں برف پگھل گئی، معاملات طے پاگئے
کیپشن: PMLN & PPP
سورس: web desk

(احتشام)(ویب ڈیسک) مسلم لیگ ن اور پیپلز پارٹی کے درمیان مذاکرات کامیاب ہوگئے، معاملات طے ، بجٹ اجلاس میں پیپلز پارٹی نے بھرپور شرکت کرکے اپنی رضا مندی ظاہر کردی۔

تفصیلات کے مطابق مسلم لیگ ن کی جانب سے بھی پیپلز پارٹی کے تمام تحفظات دور کرنے کی بڑی یقین دہانی کرادی گئی ،پیپلز پارٹی بجٹ منظوری یعنی فنانس بل کی منظوری میں ساتھ دینے کا اعلان 24 جون تک کرے گی، بلاول بھٹو زرداری 24 جون کو بجٹ پر اظہار خیال کریں گے،  پیپلز پارٹی کی آئندہ حکمت عملی بھی اسی خطاب سے سامنے آئے گی۔

ذرائع ابلاغ کے مطابق پیپلز پارٹی کو پی ایس ڈی پی خصوصاً پنجاب میں ترقیاتی فنڈز میں نظر انداز کرنے کے تحفظات تھے،پنجاب کی بیورو کریسی کے تقرر و تبادلوں سمیت دیگر امور پر بھی تحفظات تھے،بجٹ تیاری کے حتمی مرحلے پر اعتماد میں نہ لینے پر بھی پیپلز پارٹی نالاں تھی، وزیراعظم میاں شہباز شریف کی طرف سے پہلے صدر مملکت کو اعتماد میں لیا گیا۔

وزیراعظم میاں شہباز شریف نے اس کے بعد بلاول بھٹو سمیت اتحادی پیپلز پارٹی کو اعتماد میں لینے کا فیصلہ کیا، بلاول بھٹو زرداری اور وزیراعظم کی ملاقات میں دونوں جانب کا موقف سنا گیا، سمجھا گیا،دونوں جانب سے با اختیار کمیٹیوں کے سپرد تمام تحفظات کئے گئے،کمیٹیوں نے اتفاق رائے کے بعد متفقہ سفارشات اپنی اپنی قیادت کو دیں۔

پیپلز پارٹی نے مطمئن ہونے کے بعد بجٹ اجلاس میں شمولیت کا فیصلہ کرکے رضا مندی ظاہر کی، 24 جون کو بلاول بھٹوزرداری کی تقریر کے موقع پر وزیراعظم کی ایوان میں موجودگی کا بھی امکان ہے،مسلم لیگ ن کی پنجاب حکومت کی جانب سے بھی مل کر چلنے کا پیغام پہنچا دیا گیا،پنجاب کے پیغام کے بعد پیپلز پارٹی قیادت نے صوبائی رہنماؤں کو بھی ہدایات جاری کردیں۔

Watch Live Public News