بابر ٹیم کی ریڑھ کی ہڈی، میرے ہوتے پرفارمرز کو موقع ضرور ملے گا

بابر ٹیم کی ریڑھ کی ہڈی، میرے ہوتے پرفارمرز کو موقع ضرور ملے گا
کراچی: پاکستان کرکٹ ٹیم کے عبوری چیف سلیکٹر شاہد خان آفریدی کا قومی ٹیم کے کپتان بابر اعظم کو ٹیم کی ریڑھ کی ہڈی قرار دیتے ہوئے کہنا تھا کہ سلیکشن کمیٹی انہیں بھرپور سپورٹ کرے گی ۔ قومی ٹیم کے سابق کپتان اور عبوری چیف سلیکٹر شاہد خان آفریدی نے نیشنل سٹیڈیم آکر دوسرے ٹیسٹ کیلئے وکٹ کا معائنہ کیا ہے اور کیوریٹر سے بھی گفتگو کی ہے ۔ اس موقع پر میڈیا سے گفتگو کے دوران شاہد آفریدی نے کہا کہ ہم چاہتے یہ ہیں کہ کرکٹ آگے جائے لیکن جن پچز پر ہم نے کھیلا ہے اس سے ہم آگے نہیں جا سکتے ہیں ، ایسی پچز سے بولرز کو کافی نقصان ہو بھی سکتا ہے ، ہم اس سے اچھی وکٹ بنا سکتے ہیں اور دوسرے ٹیسٹ کے لیے باؤنسی وکٹ کی بھی کوشش کریں گے۔ شاہد آفریدی کا کہنا تھا کہ کرکٹ بورڈ نے موقع دیا ہے اور مجھے اپنی ذمہ داریوں کے بارے میں پتا ہے، میرے ساتھ تجربہ کار ٹیم موجود ہے ۔ عبوری چیف سلیکٹر پاکستان کرکٹ ٹیم نے کہا کہ پی سی بی انتظامیہ اور کھلاڑیوں کے درمیان رابطے کا کافی فقدان لگتا ہے ، چیئرمین سلیکشن کمیٹی کا پلیئرز سے براہ راست رابطہ ضروری ہے، پلیئرز سے انفرادی بات چیت کرکے اندازا ہوا ہے کہ مسائل کیا ہیں ، خواہش ہے کہ مدت مکمل ہونے سے قبل ہی دو ٹیمیں بنائیں تاکہ بینچ مضبوط ہو۔ انہوں نے کہا کہ اکیلا شو نہیں چلاتا ، پاور شیئرنگ سے آپ اور بھی زیادہ پاور فل ہوتے ہیں ، فخر زمان اور حارث سہیل سے خود رابطہ کر کے ان کا ٹیسٹ لیا ہے ۔ ان کا کہنا تھا کہ بابر اعظم ٹیم کے لیے ریڑھ کی ہڈی ہیں، کل بابر اعظم کا فیصلہ اچھا لگا ہے ، سلیکشن کمیٹی بابر کو بھرپورسپورٹ کرے گی۔ سابق کپتان پاکستان کرکٹ ٹیم نےمزید کہا ہے کہ اگر میں انصاف نہ کر پایا تو میرا کام مکمل نہیں ہو گا، میرے ہوتے ہوئے پرفارمرز کو موقع ضرور ملے گا۔
ایڈیٹر

احمد علی کیف نے یونیورسٹی آف لاہور سے ایم فل کی ڈگری حاصل کر رکھی ہے۔ پبلک نیوز کا حصہ بننے سے قبل 24 نیوز اور سٹی 42 کا بطور ویب کانٹینٹ ٹیم لیڈ حصہ رہ چکے ہیں۔