فافن کا امیدواروں کے کاغذات نامزدگی مسترد کرنے کے فیصلے جاری کرنے کا مطالبہ

فافن کا امیدواروں کے کاغذات نامزدگی مسترد کرنے کے فیصلے جاری کرنے کا مطالبہ
اسلام آباد: فافن نے امیدواروں کے کاغذات نامزدگی مسترد کرنے کے فیصلے جاری کرنے کا مطالبہ کردیا۔ فری اینڈ فیئر الیکشن نیٹ ورک ( فافن) نے بیان میں کہا ہے کہ ریٹرننگ افسران کسی بھی امیدوار کے کاغذات مسترد کرنے کا اپنا فیصلہ جاری کریں، تفصیلی فیصلوں کا اجراء کاغذات مسترد کرنے وجوہات کی جاننے کے لیے ضروری ہیں۔ فافن نے کہا ہے کہ ضوابط کے خلاف کاغذات نامزدگی مسترد ہونے پر الیکشن کمیشن اختیارات استعمال کرے، خلاف ضابطہ کاغذات مسترد کرنے پر الیکشن کمیشن متعلقہ افسر کے خلاف کاروائی کر سکتا ہے۔ فافن کی جانب سے بیان میں کہا گیا ہے کہ الیکشن ایکٹ 2017 کے تحت آر او کاغذات مسترد، منظور کرنے کے فیصلے جاری کرنے کے پابند ہیں۔ فافن کا مزید کہنا تھا کہ الیکشن 2024 کے لیے کاغذات نامزدگی مسترد ہونے کی شرح 12.4 فیصد رہی ہے، الیکشن 2018 کے لیے کاغذات نامزدگی مسترد ہونے کی شرح 10.4 فیصد رہی تھی، الیکشن 2013 کے لیے کاغذات نامزدگی مسترد ہونے کی شرح 14.6 فیصد رہی تھی۔
ایڈیٹر

احمد علی کیف نے یونیورسٹی آف لاہور سے ایم فل کی ڈگری حاصل کر رکھی ہے۔ پبلک نیوز کا حصہ بننے سے قبل 24 نیوز اور سٹی 42 کا بطور ویب کانٹینٹ ٹیم لیڈ حصہ رہ چکے ہیں۔