عابد شیر علی اپنی ہی حکومت پر برس پڑے،عوام کے ساتھ احتجاج کی دھمکی

عابد شیر علی اپنی ہی حکومت پر برس پڑے،عوام کے ساتھ احتجاج کی دھمکی
فیصل آباد: پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما عابد شیر علی نے اپنی ہی حکومت کیخلاف احتجاج کی دھمکی دیدی ۔ فیصل آباد میں مسلم لیگ ن کے رہنما عابد شیر علی نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ 18 گھنٹےکی لوڈشیڈنگ تھی، جس کو نواز شریف نے ختم کیا تھا، اس وقت بھی آئی ایم ایف کا پریشر ہوتا تھا، آج مفتاح اسماعیل کے بیان پر افسوس ہوتا ہے۔ عابد شیر علی نے کہا کہ مفتاح صاحب دفتر سے باہر نکلیں۔ عمران خان نے جو معاہدے کیے مفتاح اسماعیل ان پر عمل نہیں کریں، آئی ایم ایف سے نئے معاہدے کیے جائیں۔انہوں نے کہا کہ آج ہمارا مقابلہ عمران خان سے نہیں، بجلی کے بلوں سے شروع ہوگیا ہے، خدارا عوام کو ریلیف دیں، حلقوں میں جانا مشکل ہوتا جارہا ہے۔اگر عوام کو ریلیف نہ دیا گیا تو ہم خود عوام کے ساتھ احتجاج میں شامل ہوجائیں گے،200 یونٹ تو ایک موٹر چلانے والے کا آجاتا ہے۔ اس موقع پر لیگی رہنما طلال چوہدری نے کہا کہ اس وقت سیلاب کے ساتھ ساتھ بجلی کے بل بھی سیلاب ہیں،200 یونٹ تک ریلیف نا کافی ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ سیلاب میں پنجاب اور خیبرپختونخوا کے وزرائے اعلیٰ غائب ہیں، دونوں وزرائے اعلیٰ عمران خان کے جلسے بھرنےمیں مصروف ہیں۔
ایڈیٹر

احمد علی کیف نے یونیورسٹی آف لاہور سے ایم فل کی ڈگری حاصل کر رکھی ہے۔ پبلک نیوز کا حصہ بننے سے قبل 24 نیوز اور سٹی 42 کا بطور ویب کانٹینٹ ٹیم لیڈ حصہ رہ چکے ہیں۔